فلسطین اسرائیل تنازع

مشرق وسطیٰ ۔ امریکی صدر کی نیتن یاہو سمیت اہم مغربی اتحادیوں کے ساتھ فون پر مشاورت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکہ کے صدر نے اتوار کے روز بھی مشرق وسطیٰ کی صورت حال کے پیش نظر اپنے اہم اتحادیوں کے ساتھ مشاورت اور رابطوں میں تیزی کو جاری رکھا ہے۔ اپنے اتحادیوں کے ساتھ اسرائیل اور فلسطینی ملیشیا حماس کے درمیان جنگی صورت حال اور اس کے نتیجے مشرق وسطیٰ کے لیے خطرات پر غور کیا گیا۔

صدر جوبائیڈن نے اتوار کے روز جن اتحادیوں کے ساتھ بات چیت کی ان میں کینیڈا کے وزیر اعظم جسٹن ٹروڈو، فرانس کے صدر میکرون، برطانوی وزیر اعظم رشی سونک، کے علاوہ جرمنی کے چانسلر اولف شولز اور اٹلی کی وزیر اعظم جارجیا میلونی سے فون پر تبادلہ خیال کیا ہے۔

علاوہ ازیں جوبائیڈن نے اسرائیلی وزیر اعظم نیتن یاہو کے ساتھ اپنے قریبی مشاورتی عمل کو جاری رکھنے کے ساتھ ساتھ پوپ فرانسس کے ساتھ بھی فون پر بات کی۔

وائٹ ہاوس کے مطابق اسرائیل اور حماس کی جنگ تیزی سے پھیل سکنے کے خدشے کا ذکر کیا۔ جیسا کہ غزہ پر اسرائیلی بمباری کے بعد لبنان میں صورت حال میں شدت آ رہی ہے۔

تاہم فوری طور پریہ بات واضح نہیں ہو سکی کہ امریکہ نے گروپ سیون کے اہم رکن اور امریکہ کے قریبی اتحادی جاپان کے وزیر اعظم کو اتوار کے روز کی فونک مشاورت میں صدر جوبائیڈن نے کیوں شامل نہیں کیا ہے۔

خیال رہے اسی مہینے کے دوران گروپ سیون کے وزرا ئے خزانہ مراکش میں ایک اجلاس میں اکٹھے ہو چکے ہیں۔ جبکہ امریکی صدر نے فروری 2022 میں یوکرین پر روسی حملے کے بعد گروپ سیون کے سربراہان کا ایک فاصلاتی اجلاس بھی منعقد کیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں