روسی ترجمان نے پیوتن کی بیماری اور ' ڈبل باڈیز' کے استعمال کی تردید کر دی

یہ باتیں جھوٹ پر مبنی اور مضحکہ خیز کہانیاں ہیں۔ دمتری پیسکوف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

روس نے ان مفروضوں کی تردید کی ہے کہ صدر ولادی میر پیوتن کی بیمار میں ہیں اور درست حالت میں نہیں۔ کریملن کے ترجمان دمتری پیسکوف نے اخبار نویسوں کے ایک معمول کی بات چیت میں اس باتوں کو فرضی اور مضحکہ خیز کہانیاں قرار دیا۔

ترجمان نے اس امر کو بھی مسترد کیا کہ روسی صدر کی بیماری کی وجہ سے ان کی جگہ کوئی فرد ' ڈبل باڈیز ' کے انداز میں اداکاری سے کام لے کر پیوتن کی خانہ پوری کر رہا ہے۔

اخبار نویسوں نے پیوتن کے بارے میں ایک روسی ٹیلی گرام چینل میں سامنے آنے والی بغیر ذرائع کے رپورٹ کے بارے میں پوچھا تھا۔ یہ مذکورہ چینل نے مغربی میڈیا سے اٹھائی تھی۔ کہ اتوار کی رات پیوتن کی صحت کو سخت مرحلہ درپیش ہوا ۔

واضح رہے پیوتن جوڈو کے حوالے سے غیر معمولی شوق اور جوش رکھتے ہیں۔ اور جوڈو کا یہ ' ایکشن مین ' سات اکتوبر کو 71 برس کا ہو گیا ہے۔ اس کے باوجود وہ اپنے اجلاسوں کا مسلسل اور تھکا دینے والا شیڈول مین ٹین رکھتا ہے، عوام کے سامنے مختلف مواقع پر اپنے آپ کو لاتا رہتا ہے یا ٹی وی پر دکھتا رہتا ہے۔

پچھلے ہی ہفتے پیوتن نے چین کا دورہ کیا ہے۔ واپسی پر دو روسی شہروں میں رکتا ہوا کریملن پہنچا۔

اس سے قبل 2020 میں بھی پیوتن ان خبروں کی تردید کر چکے ہیں کہ وہ اپنی جگہ کسی دوسرے فرد کو بھیج کر ' ڈبل باڈی ' استعمال کرتے ہیں۔ البتہ ایک مرتبہ سکیورٹی کی وجوہات پر ایسا کیا تھا۔ اسی سال اپریل میں کریملن کے ترجمان پیسکوف نے ڈبل باڈیز کے استعمال کی باتوں کو مضحکہ خیز اور ایک اور جھوٹ قرار دیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں