یمن حملے کے بعد بحرین کا ایک فوجی ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

بحرینی فوجی حکام کے مطابق سعودی عرب کی سرحد پر یمن کے حوثی باغیوں کے حملے کے چند دن بعد ایک بحرینی فوجی ہلاک ہو گیا ہے جو خلیجی ریاست کا صرف ایک ماہ کے دوران پانچواں جانی نقصان ہے۔

بحرین کی دفاعی فوج نے بتایا کہ پیر کے روز ہونے والے حملے کے بعد فوجی زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسا۔

حملے کی تفصیلات بتائے بغیر جمعرات کو دیر گئے جاری کردہ بیان میں کہا گیا، "حوثی افواج کی جارحیت کے نتیجے میں شدید زخمی ہونے والے میجر محمد سالم محمد عنبر چل بسے۔"

گذشتہ ماہ کے آخر میں سعودی-یمن سرحد کے قریب ڈرون حملے میں چار بحرینی فوجی ہلاک ہو گئے تھے جو 2015 میں پانچ فوجیوں کی ہلاکت کے بعد بحرین کا سب سے بڑا جانی نقصان ہے۔

یہ ہلاکتیں اس وقت ہوئی ہیں جب سعودی عرب جزیرہ نما عرب کے غریب ترین ملک کے لیے امن عمل پر زور دے رہا ہے جو جنگ کی وجہ سے ایک بڑے انسانی بحران کا شکار ہے۔

گذشتہ سال اقوامِ متحدہ کی ثالثی میں جنگ بندی کے نفاذ کے بعد سے حتیٰ کہ اکتوبر میں اس کے ختم ہو جانے کے بعد بھی دشمنی میں ڈرامائی طور پر کمی آئی ہے۔

2014 میں حوثیوں کی جانب سے دارالحکومت صنعا سے بین الاقوامی طور پر تسلیم شدہ حکومت کو بے دخل کرنے کے بعد بحرین ان متعدد ممالک میں سے ایک تھا جس نے اتحاد میں اپنی افواج بھیجی تھیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں