خاتون رکن کانگریس نے جوبائیڈن کو فلسطینیوں کی نسل کشی کا حامی قرار دیدیا

جوبائیڈن ! غزہ میں جنگ بندی کی حمایت کریں ورنہ 2024 میں ہمیں اپنے ساتھ نہ گنیں: راشدہ طلائب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکی ڈیموکریٹ رکن کانگریس راشدہ طلائب نے امریکی صدر جوبائیڈن کی پالیسیوں پر تنقید کرتے ہوئے جوبائیڈن کو فلسطینیوں کی نسل کشی کا حامی قرار دیا ہے۔ جوبائیڈن کے ان اقدامات کے نتائج اگلے صدراتی انتخابات میں سامنے آئیں گے۔

اپنے ویڈیو پیغام میں امریکی کانگریس کی رکن نے غزہ کے لیے فوری جنگ بندی کا مطالبہ کیا تاکہ فلسطینی شہریوں کی جانیں بچائی جا سکیں۔

ان کا کہنا تھا ' جوبائیڈن نے فلسطینیوں کی نسل کشی کی حمایت کی ہے۔' طلائب کی ویڈیو میں اسرائیلی بمباری سے ہلاک شدہ اور زخمی فلسطینیوں کو بھی دیکھا جا سکتا ہے۔ نیز یہ بھی دیکھا جا سکتا ہے کہ پورے امریکہ میں فلسطینیوں کے حق میں مظاہرے ہو رہے ہیں جبکہ صدر جوبائیڈن اور جوبائیڈن انتظامیہ اسرائیل کی حمایت کا اعلان کر چکے ہیں، اس وجہ سے نیتن یاہو جوبائیڈن کا شکریہ ادا کر رہے ہیں۔

وائٹ ہاوس نے اپنی ہی رکن کانگریس کے صدر پر نسل کشی کے الزام کا تو کوئی جواب نہیں دیا ۔البتہ قومی سلامتی کے مشیر نے یہ کہا ' جیسا کہ آپ ہمیں سن چکے ہیں۔ ہم انسانی بنیادوں پر جنگ میں وقفے کرنے کے حامی ہیں۔ تاکہ انسانی بنیادوں پر غزہ میں اشیا تقسیم کی جاسکیں اور غزہ میں مغویوں کو رہائی مل سکے۔'

سلامتی کے مشیر نے مزید کہا ' جس چیز کی ہم حمایت نہیں کرتے وہ اسرائیل سے یہ مطالبہ کرنا ہے کہ حماس کے دہشت گردوں سے اپنا دفاع نہ کرو، یہی ایک مستقل جنگ بندی ہو گی۔'

دوسری طلائب نے کہا ' امریکی عوام جوبائیڈن کو بھولیں گے نہیں۔ اس لیے آج جنگ بندی کی حمایت کرو ورنہ ہمیں 2024 میں اپنی حمایت میں نہ گننا۔ مسٹر پریزیڈنٹ ! امریکی عوام اس معاملے میں آپ کے ساتھ نہیں ہیں۔ ہم یہ بات 2024 میں بھی یاد رکھیں گے۔'

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں