ہسپتالوں کے نیچے اور اطراف حماس کے نیٹ ورک کا کھوج لگایا ہے: اسرائیل

حماس جنگی مشین کے حصے کے طور پر ہسپتالوں کو استعمال کر رہی: صہیونی چیف فوجی ترجمان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

اسرائیلی فوج نے اتوار کو دعویٰ کیا ہے کہ اس نے شمالی غزہ میں ہسپتالوں کے نیچے اور ملحقہ مقامات پر حماس کی سرنگوں، کمانڈ سینٹرز اور راکٹ لانچروں کے نیٹ ورک کا کھوج لگایا ہے۔ اسرائیل کے چیف ملٹری ترجمان ریئر ایڈمرل ڈینیئل ہگاری نے صحافیوں کو بتایا کہ تنظیم حماس اپنی جنگی مشین کے حصے کے طور پر ہسپتالوں کو منظم طریقے سے استعمال کر رہی ہے۔

دوسری طرف تحریک مزاحمت اسلامی ۔ حماس نے ان الزامات کو مسترد کردیا اور کہا ہے کہ اسرائیل بے بنیاد جھوٹ پھیلا رہا ہے۔

میڈیا بریفنگ کے دوران ہگاری نے ایسی ویڈیوز، تصاویر اور آڈیو ریکارڈنگ پیش کیں جن کے بارے میں انہوں نے کہا کہ حماس کی جانب سے ہسپتالوں کو کور کے طور پر استعمال کرنے اور عام شہریوں کو جنگی علاقوں سے نکلنے سے روکنے کی حکمت عملی کا مظاہرہ کیا گیا ہے۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ جنگ کے دوران غزہ سے اسرائیل پر داغے گئے 800 سے زائد راکٹ گرے اور انکلیو کے اندر جا گرے تھے جس سے کئی فلسطینی مارے گئے۔ انہوں نے کہا حماس اپنے کچھ راکٹ مقامی طور پر تیار کرتی اور بیرون ملک سے بھی راکٹ حاصل کرتی ہے۔

ہگاری کے ان بیانات کی تصدیق کرنا ممکن نہیں ہے۔ اسرائیلی فوج نے ہفتوں سے غزہ کے مرکزی الشفا ہسپتال کو نشانہ بنا رکھا ہے۔ الشفا ہسپتال کے اطراف کئی مرتبہ بمباری کی جا چکی ہے۔ اسرائیل نے حماس پر الزام لگایا ہے کہ وہ اسے زیر زمین آپریشنل مراکز کے لیے ڈھال کے طور پر استعمال کر رہی ہے۔

ہگاری نے اب شمالی غزہ کے دو دیگر ہسپتالوں پر بھی اسی طرح کے الزامات لگائے ہیں – ان میں قطر کی مالی اعانت سے چلنے والا شیخ حمد ہسپتال اور ایک انڈونیشیائی ہسپتال شامل ہے۔

ہگاری نے کہا کہ قطری ہسپتال کی دو ویڈیوز میں حماس کی سرنگوں کو کھولتے ہوئے اور حماس کے بندوق برداروں کو ہسپتال کے اندر سے اسرائیلی فوجیوں پر فائرنگ کرتے ہوئے دکھایا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سیٹلائٹ کی ایک تصویر میں انڈونیشیائی ہسپتال سے سڑک کے پار واقع راکٹ لانچر دکھائے گئے ہیں۔ انہوں نے ہسپتال سے 75 میٹر کے فاصلے سے اسرائیل پر راکٹ داغے ہیں۔ ایسا اس لیے کیا گیا کہ حماس کے افراد بخوبی جانتے ہیں کہ اگر اسرائیل اس طرح لانچنگ پیڈ پر فضائی حملہ کرے گا تو ہسپتال کو نقصان پہنچے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں