رونالڈو کی فلسطینی پرچم اٹھائے تصویر نے ہنگامہ برپا کردیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیل اور حماس کے درمیان جنگ دوسرے مہینے میں داخل ہوگئی ہے۔ لڑائی کو 34 روز ہوگئے ہیں۔ اسرائیلی فوج نے گزشتہ منگل کو اعلان کیا تھا کہ وہ غزہ سٹی کے درمیان میں پہنچ گئی ہے۔ اس جنگ کے حوالے سے پرتگالی فٹ بال کھلاڑی کرسٹیانو رونالڈو کی ایک تصویر نے ہنگامہ برپا کردیا ہے۔ سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی اس تصویر میں رونالڈو کو فلسطینی پرچم اٹھائے ہوئے دکھایا گیا ہے۔

اسے فیس بک اور ایکس پلیٹ فارم پر ہزاروں شیئرز اور تبصرے ملے ہیں۔ لوگوں کی بڑی تعداد نے لیجنڈ فٹ بال سٹار کی زبردست تعریف کی ہے۔ تاہم یہ دعویٰ غلط ہے کیونکہ یہ تصویر جعلی تھی۔ یہ تصویر درحقیقت مراکش کے کھلاڑی جواد الیامیق کی ہے۔ سرچ انجن کے ذریعے کی جانے والی تلاش سے یکم دسمبر 2022 کو گیٹی امیجز کی ویب سائٹ پر شائع ہونے والی تصویر کا اصل ورژن بھی سامنے آگیا ہے۔

اصل تصویر
اصل تصویر

اس تصویر میں مراکش کے کھلاڑی کو گروپ مرحلے میں کینیڈین ٹیم کے خلاف اپنے ملک کی فتح کے بعد فلسطینی پرچم اٹھائے ہوئے دکھایا گیا ہے۔ اس میچ کو جیت کر مراکش نے قطر میں ہونے والے 2022 ورلڈ کپ کے 16ویں راؤنڈ کے لیے کوالیفائی کر لیا تھا۔

ایجنسی فرانس پریس کے مطابق اسی تاریخ کو الیامیق ایک اور تصویر میں فلسطینی پرچم لہراتے ہوئے نظر آئے۔ اسرائیل اور حماس کے درمیان جنگ کے نئے دور کے شروع ہونے کے بعد سے بہت ساری غلط اور گمراہ کن معلومات سوشل میڈیا پر پھیلائی جا چکی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں