مسافر کی جیب میں کاغذ کی موجودگی کی وجہ سے ہوائی جہاز کی روم میں ہنگامی لینڈنگ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

چند روز قبل اطالوی اور فرانسیسی میڈیا کی جانب سے ایک عجیب و غریب واقعہ رپورٹ کیا گیا تھ جس نےسوشل میڈیا پر بڑے پیمانے پر ہنگامہ برپا کر دیا تھا۔ یہ واقعہ روم ایئرپورٹ پر طیارے کی ہنگامی لینڈنگ تھی جو ایک مصری مسافر کے قبضے سے ملنے والے ایک کاغذ کی وجہ سے کی گئی جس پر دو الفاظ لکھے گئے تھے۔

منگل 7 نومبر کی شام ٹھیک ساڑھے پانچ بجے فرانس کے دارالحکومت پیرس سے آنے والی اور مصر کے دارالحکومت قاہرہ جانے والی ایک پرواز کو روم کے ہوائی اڈے پر ہنگامی لینڈنگ کرنا پڑی۔

فرانسیسی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق طیارے کے عملے کو ایک مصری مسافر پر شبہ ہوا جو بدمزاج اور عجیب و غریب حرکات کر رہا تھا۔ اس نے دوائی مانگی اور دوائی کی شیٹ پر دو لفظوں کا جملہ لکھا جس سے اس کے خودکشی کے ارادے کے بارے میں شبہ پیدا ہوا۔

مسافر کی مشکوک حرکات کی وجہ سے طیارےکے عملے نے جہاز کو قریبی ایئر پورٹ اتارنے کا فیصلہ کیا۔ انہیں اس وقت روم کا بین الاقوامی ہوائی اڈہ قریب پڑتا تھا۔

جہازکے عملے نے لینڈ کرنے کا فیصلہ اس وقت کیا جب طیارہ کروشیا کے بریک جزیرے پر پرواز کر رہا تھا، جہاں سے اس نے اطالوی دارالحکومت روم کے فومیسینو ایئرپورٹ جانے کا فیصلہ کیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کو حاصل کردہ ویڈیوز کے مطابق مصری مسافرعملے سے بات کر رہا تھا کہ اچانک اس کی آواز بلند ہوئی اور اس نے چیخنا شروع کر دیا اور ان سے اسے چھوڑنے کا کہا اور دہراتے رہے کہ "مسئلہ کہاں ہے؟... میں مصری ہوں اور مجھے مدد کی ضرورت ہے."

اطالوی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق روم ایئرپورٹ پر رن وے کے ارد گرد اسنائپرز کو اس ڈر سے تعینات کیا گیا تھا کہ مسافر کسی دہشت گردی کی کارروائی شروع کر دے گا۔ لینڈنگ کے فوراً بعد حکام نے اس سے پوچھ گچھ کی اور اس سے اس جملے کے راز کے بارے میں پوچھا کہ "میں خدا سے پیار کرتا ہوں۔ کہ اس نے لکھا اور اس کا دہشت گردانہ کارروائی کرنے کا ارادہ ہے یا نہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں