فلسطینیوں کو بے گھر کرنے کی کسی بھی کوشش کو مسترد کرتے ہیں :یورپی کمیشن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

یورپی کمیشن کی صدر ارسلا وان ڈیر لیین نے فلسطینیوں کو بے گھر کرنے کی کسی بھی کوشش کو مسترد کرتے ہوئے، یروشلم کی تاریخی اور قانونی حیثیت کے تحفظ کی اہمیت پر زور دیا ہے۔

اتوار کو عمان میں اردنی شاہ عبداللہ دوم کے ساتھ ملاقات کے دوران یورپی کمیشن کی صدر نے دو ریاستی حل کی بنیاد پر امن کے حصول کی ضرورت پر زور دیا۔

دونوں رہ نماؤں نے ملاقات کے دوران مغربی کنارے میں آباد کاروں کے فلسطینیوں کے خلاف تشدد کی مذمت کی۔

ایک تباہ کن انسانی صورتحال

اردنی فرمانروا شاہ عبداللہ دوم نے غزہ میں جنگ بندی کے قیام، شہریوں کی حفاظت اور وہاں انسانی امداد کی بلاتعطل ترسیل کو یقینی بنانے کے لیے فوری طور پر کارروائی کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔

انہوں نے غزہ کی پٹی میں بگڑتی ہوئی انسانی صورتحال پر خبردار کرتے ہوئے عالمی برادری سے مطالبہ کیا کہ وہ بین الاقوامی قانون اور اقوام متحدہ کے چارٹر پرعمل کرتے ہوئے غزہ میں انسانی تباہی کو روکے۔

غزہ کی صورت حال آتش فشاں بن کر پھٹ سکتی ہے

شاہ عبداللہ نے اس بات پر زور دیا کہ اسرائیل کی غزہ پر گھناؤنی جنگ کا تسلسل اور مغربی کنارے اور یروشلم میں اس کی غیر قانونی خلاف ورزیاں پورے خطے کی صورت حال کے لیے آتش فشاں بن کر پھٹ سکتی ہیں۔

انہوں نے اس سلسلے میں یورپی یونین کے کردار کی طرف اشارہ کرتے ہوئے دو ریاستی حل پر مبنی منصفانہ اور جامع امن کے حصول کے لیے مسئلہ فلسطین کے سیاسی حل کے لیے ٹھوس کوششوں پر زور دیا۔

غزہ کی امداد میں اضافے کا مطالبہ

یورپی کمیشن کی صدر نے کل ہفتہ کو کہا کہ وہ مصری صدر کے ساتھ فلسطینیوں کی جبری بےدخلی کو مسترد کرنے اور دو ریاستی حل پر مبنی سیاسی افق کی ضرورت پر متفق ہیں۔

بعد ازاں وون ڈیر لیین نے رفح کراسنگ کا دورہ کیا اور غزہ کی پٹی میں فلسطینیوں کو انسانی امداد کی منتقلی کے لیے مصر کی کوششوں کی تعریف کی۔ انہوں نے غزہ کو مزید امداد کی فراہمی کی ضرورت پر زور دیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں