غزہ کے 100 سے زائد انخلاء شدہ افراد ترکیہ پہنچنے والے ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ترکیہ کے وزیرِ صحت اور وزارتِ خارجہ کے ترجمان نے بتایا کہ غزہ سے 100 سے زائد انخلاء شدہ افراد پیر کو ترکیہ پہنچنے والے ہیں جن میں درجنوں ایسے افراد بھی شامل ہیں جو وہاں طبی علاج حاصل کریں گے۔

وزیرِ صحت فخرالدین کوکا نے بتایا کہ 61 مریض اپنے 49 رشتہ داروں کے ہمراہ اتوار کی شام غزہ سے مصر پہنچے اور العریش ہسپتال میں رات گذارنے کے بعد پیر کو انقرہ کے لیے روانہ ہونے والے تھے۔

انہوں نے گذشتہ ہفتے کہا تھا کہ انقرہ غزہ سے کینسر کے تقریباً 1000 مریضوں میں سے زیادہ سے زیادہ کو ترکی لانا چاہتا تھا۔ پہلے 27 مریض گذشتہ جمعرات کو انقرہ پہنچے تھے۔

وزارتِ خارجہ کے ترجمان نے بتایا کہ علیحدہ طور پر ترک، ترک قبرصی اور ان کے رشتہ داروں پر مشتمل 87 افراد کا ایک گروپ اتوار کو غزہ سے مصر پہنچا اور انہیں پیر کو دیر گئے استنبول کے لیے روانہ ہونا تھا۔

وزارتِ خارجہ کی طرف سے اشتراک کردہ فوٹیج میں دکھایا گیا ہے کہ ویک اینڈ پر غزہ سے مصر جانے والے 44 ترک اتوار کو استنبول پہنچے۔

کیسیلی نے یہ بھی کہا کہ اگر زمینی حالات اجازت دیں تو ترکی کا ارادہ پیر کو مزید 100 افراد کو غزہ سے نکالنے کا ہے۔

پارلیمنٹ میں خطاب کرتے ہوئے وزیرِ خارجہ ہاکان فیدان نے کہا کہ ترکی اپنے شہریوں کو غزہ سے نکالنے کی کوششیں جاری رکھے ہوئے تھا۔

انہوں نے کہا، "آج تک ہم نے اپنے 170 شہریوں اور ان کے رشتہ داروں کا غزہ سے محفوظ اخراج کر لیا ہے۔" اور مزید کہا کہ پیر اور منگل کو مزید انخلاء ہوگا۔

ایک ماہ قبل ترکی کے نائب وزیرِ خارجہ احمد یلدیز نے کہا تھا کہ تقریباً 700 افراد جن میں ترک، فلسطینی اور شمالی قبرصی شہری شامل تھے، نے غزہ سے انخلاء کے لیے ترکی کو درخواست دی تھی۔ ان میں سے 300 کے قریب ترک شہری تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں