کانگریس سے خطاب منسوخ،زیلنسکی ویڈیو لنک کے ذریعے G7 اجلاس میں شرکت کریں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

جاپانی حکومت نے اعلان کیا ہے کہ یوکرین کے صدر ولادیمیر زیلنسکی بدھ کے روز گروپ سیون ممالک کے رہ نماؤں کی ایک ویڈیو میٹنگ میں شرکت کریں گے جو ٹوکیو میں ہو رہی ہے۔

حکومتی ترجمان ہیروکازو ماتسونو نے صحافیوں کو بتایا کہ جاپانی وزیر اعظم فومیو کشیدہ "جی 7 " سربراہی اجلاس کی میزبانی کریں گے، جس کا انعقاد ویڈیو کے ذریعے کیا جائے گا۔ اجلاس میں جی 7 ممالک کے رہ نماؤں کے علاوہ یوکرین کے صدر بھی خطاب کریں گے۔

صدر زیلنسکی اپنے فوجی کمانڈروں کے ساتھ
صدر زیلنسکی اپنے فوجی کمانڈروں کے ساتھ

جاپانی حکومت کے ترجمان کے مطابق ’جی 7 ‘ ممالک کے رہ نما اپنے سربراہی اجلاس میں "عالمی برادری کے لیے اہم موضوعات، جیسے یوکرین، مشرق وسطیٰ کے حالات اور مصنوعی ذہانت کے مسئلے پر بات کریں گے‘‘۔

منگل کے روز یوکرین کے صدر نے اچانک امریکی سینیٹ کے اراکین کے ساتھ ایک اجلاس میں ویڈیو کے ذریعے اپنی طے شدہ شرکت منسوخ کر دی۔

سینیٹ کے ڈیموکریٹک لیڈر چک شومر نے صحافیوں کو ایک بیان میں کہا کہ "زیلینسکی ہمارے ساتھ بریفنگ میں حصہ نہیں لے سکتے‘‘۔

واشنگٹن نے فروری 2022ء میں یوکرین پر روسی حملے کے بعد سے بیشتر ممالک کے ساتھ ملک کر کیئف کو فوجی امداد فراہم کی ہے۔

لیکن ڈیموکریٹک صدر جو بائیڈن کا یوکرین کی مالی مدد جاری رکھنے کا عہد خطرے میں پڑ گیا ہے۔ کیئف کو خدشہ ہے کے جوابی حملے سے مطلوبہ فوائد حاصل نہیں ہوئے۔

کانگریس بدھ کے روز کیئف کے لیے فوجی، انسانی اور اقتصادی امدادی پیکج پر ایک طریقہ کار سے متعلق ووٹنگ کرنے والی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں