ترک صدر نے یو این کو ’اسرائیل پروٹیکشن کونسل‘ قرار دے دیا

رجب طیب ایردوآن امریکی ویٹو کے بعد سکیورٹی کونسل پر برس پڑے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ترک صدر رجب طیب ایردوآن نے امریکہ کی جانب سے غزہ کے لیے سیز فائر کی قرارداد کو ویٹو کرنے کے بعد اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی مذمت کرتے ہوئے اسے ’اسرائیل پروٹیکشن کونسل‘ قرار دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ سات اکتوبر سے سلامتی کونسل اسرائیل کی تحفظ اور دفاعی کونسل بن چکی ہے۔

امریکہ نے جمعے کو سلامتی کونسل کی اس قرارداد کو ویٹو کر دیا جس میں غزہ کے اندر سیز فائر کا مطالبہ کیا گیا تھا۔

یوں واشنگٹن نے اقوام متحدہ کے سربراہ انتونیو گوتریس اور عرب ممالک کی قیادت میں سیز فائر کی کوششوں کو ختم کر دیا۔

اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں ویٹو کا اختیار رکھنے والے پانچ ممالک کی جانب اشارہ کرتے ہوئے ایردوآن نے کہا کہ ’کیا یہ انصاف ہے؟' انہوں نے مزید کہا کہ ’دنیا پانچ سے بڑی ہے۔‘

ترک رہنما نے مزید کہا کہ ’ایک اور دنیا ممکن ہے لیکن امریکہ کے بغیر۔‘

’امریکہ اپنے پیسے اور فوجی ساز وسامان کے ساتھ اسرائیل کے ساتھ کھڑا ہے۔ ارے امریکہ! آپ اس کے لیے کتنا ادا کرنے جا رہے ہیں؟‘

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں