یمن اور حوثی

مسلح شخص نے صنعا میں گھر میں گھس کرخاندان کے سامنے انجینیر قتل کر دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمنی دارالحکومت صنعا میں حوثی گروپ کے زیر کنٹرول علاقوں میں امن وامان کی خراب صورت حال میں ایک مسلح شخص نے انجینیر کے گھر پر دھاوا بول کر اسے اس کے اہل خانہ کے سامنے خوفناک انداز میں قتل کر دیا۔

مقامی میڈیا ذرائع نے بتایا کہ صنعاء کی ہائل سٹریٹ پر ایک مسلح شخص نے شکری احمد علی نعمان القدسی نامی انجینیر کے اپارٹمنٹ پر دھاوا بولا اور اسے گولیاں مار کر قتل کردیا اور خود وہاں سے فرار ہوگیا۔

ذرائع نے مزید بتایا کہ اپارٹمنٹ پر دھاوا بولنے والا مسلح شخص الاعرج نامی دوسرے شخص کی تلاش میں تھا لیکن اس نے انجینیر شکری کے اپارٹمنٹ پر دھاوا بولا اور اسے تین گولیاں ماریں جس سے وہ اپنے بچوں کے سامنے ہلاک ہوگیا۔

ذرائع کے مطابق قاتل حوثی گروپ کا مسلح رکن ہے۔ ارتکاب جرم کے بعد اس نے مقتول کے بیٹے کو دھمکی دی کہ وہ اسے بھی قتل کردے گا۔ پڑوسیوں نے فائرنگ کی آوازیں سنیں تاہم قاتل فرار ہوگیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ قاتل تاحال فرار ہے، تاہم حوثیوں کے زیر کنٹرول حکام نے اس کیس کے بارے میں کچھ نہیں کیا۔

صنعا اور حوثی گروپ کے زیر کنٹرول باقی علاقوں میں افراتفری، قتل و غارت گری اور جرائم کی شرح میں نمایاں اضافہ دیکھنے میں آ رہا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں