پاکستان اور اومان کی مشترکہ بحری مشقیں' ثمر الطیب 2023 ' مکمل ہو گئیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

' ثمر الطیب' 2023 کے نام سے پاکستان اور اومان کی مشترکہ بحری مشقیں اختتام پذیر ہو گئی ہیں۔ پاک بحریہ کے جاری کردہ بیان کے مطابق دونوں ملکوں کی ان بحری مشقوں کے دوران بحری افواج نے اپنی پیشہ ورانہ مہارت میں اضافے اور دوطرفہ آپریشنل اہلیت کے اہداف ھاصل کیے۔

پاکستان اور اومان کی بحری افواج کی مشترکہ مشقوں کا یہ 11واں ایڈیشن تھا۔ دونوں کی بحری افواج 2002 سے خلیج اومان میں مشترکہ مشقوں کا اہتمام کر رہی ہیں۔

واضح رہے پاکستان اور اومان دونوں مشترکہ میری ٹائم علاقہ رکھتے ہیں، اس وجہ سے دونوں کے درمیان قریبی تعاون کا ماحول مقابلتاً زیادہ ہے۔ نیز دونوں اپنے سمندر کے پانیوں کی حفاطت کے لیے باہم تعاون کے رشتے میں منسلک ہیں۔

پاک بحریہ نے ان مشترکہ مشقوں کے اختتام پر جاری کیے گئے بیان میں کہا ہے' ثمر الطیب 2023 کا انعقاد پاکستان اور اومان کے ساتھ ساتھ پاک بحریہ اور رائل بحریہ آف اومان کے درمیان مضبوط برادرانہ تعلقات کا مظہر ہیں۔

ہیلی کاپٹر تھا۔ اسی طرح سرعت کے ساتھ حملہ آور ہونے والے بحری جہاز ' قوت ' تھا اور ایک میری ٹائم پیٹرول ائیر کرافٹ شامل تھا، نیز بحری مشقوں میں پاکستان کی سپیشل آپریشن فورسز نے بھی حصہ لیا۔

مشقوں کو 'ہاربر فیز' اور 'سی فیز ' دوحصوں میں تقسیم کیا گیا تھا۔ ہاربر فیز پلاننگ اور ڈسکشنز سے متعلق تھا جبکہ 'سی فیز' آپریشنز سے متعلق تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں