پہلی بار دیکھی جانے والی پرفارمنس ۔۔ نیوزی لینڈ کی رکن پارلیمنٹ کا ایوان میں رقص

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

نیوزی لینڈ کی کم عمر ترین رکن پارلیمنٹ منتخب ہونے والی اکیس سالہ ایم پی حنا روہیٹی مآیبے کلارک نے ایوان کے اندر روایتی ’حکا رقص‘ پیش کر کے سب کو حیران کر دیا۔ حنا کا تعلق نیوزی لینڈ کے اصل باسیوں کی نسل سے ہے۔

منتخب ایوان کے دوسرے ارکان نے نوخیز رکن پارلیمنٹ کے ساتھ ہم آواز ہو کر زور دار جنگی نعرے بلند کیے۔ میں اپنے آبا واجداد کی طرح وہی نعرے لگا رہی ہوں جو انہوں نے دنیا کے سب سے بڑی سمندری سفر پر روانہ ہوتے وقت بلند کیے ۔۔۔’’ہم آ گئے ہیں ، ہم پہنچ چکے ہیں، ہم سمندری سفر شروع کر لیا ہے۔‘‘

اصلی النسل کم عمر پارلیمنٹرین

نیوزی لینڈ کے اصلی النسل سلسلے سے تعلق رکھنے والی حنا روہیٹی مآیبے کلارک ملک کی کم عمر ترین ایم پی ہیں۔ ملک کی 170 سالہ تاریخ میں وہ سب سے کم عمر رکن ہیں۔ اس سے قبل جیمز سٹوریٹ ورٹلی کو 1853 میں رکن منتخب کیا گیا۔ اس وقت ان کی عمر بیس برس اور سات ماہ تھی۔

جنگی نعرے

حکا نامی رقص دراصل جنگی نعرے لگاتے ہوئے کیا جانے والا رقص ہے، جو نیوزی لینڈ کے اصلی النسل مآوری کیا کرتے تھے۔

حکا رقص مل کر جسمانی حرکات وسکنات کے ذریعے کیا جاتا ہے۔ اس دوران تشدد آمیز اشاروں کے ساتھ بیروں کو زمین پر زور دے پٹخا جاتا ہے۔ رقص کے دوران لے کے ساتھ لگائے جانے والے نعروں کو جسمانی حرکات وسکنات کے ساتھ ہم آہنگ کیا جاتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں