شادی کی رات دلہن عروسی لباس میں جیل منتقل، دلہا فرار، معاملہ کیا ہے؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

میکسیکو میں ایک نوبیاہتا جوڑے کو فراڈ کے الزام میں پولیس نے گرفتار کرنے کی کوشش کی جس پر دلہن کو دھر لیا گیا جب کہ دلہا فرار ہوگیا۔

’نیویارک پوسٹ‘ کی ویب سائٹ کی رپورٹ کے مطابق ایک غیرمتوقع وقت پر میکسیکو میں پولیس نے شادی کی رات ایک دلہن کوبلیک میلنگ کے الزام میں گرفتار کیا اور اسے اس کے عروسی لباس میں جیل لے جایا گیا ہے۔

سفید عروسی لباس میں جیل میں بند

سوشل میڈیا پر پوسٹ کی جانے والی تصویروں میں ملزمہ "نینسی" کو ہتھکڑیوں کے علاوہ سفید لباس پہنے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔

اسے پراسیکیوٹر کے دفتراس وقت لے جایا گیا جب وہ اور اس کے شوہر کلیمینٹ میں اپنی شادی کی تقریب کے لیے چرچ پہنچے تھے۔ اس دوران پولیس نے چھاپہ مار کر دلہن کو گرفتار کرلیا جب کہ دلہا فرار ہوگیا۔

دولہا فرار

اس کا شوہر جس کا عرفی نام "ریٹن" یا "دی ماؤس" ہے بھی انہی الزامات میں مطلوب ہے لیکن فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا۔

اس جوڑے کو 22 دسمبر 2023ء کو میکسیکو سٹی کے قریب چکن کے تاجروں سے بھتہ لینے اور پولٹری اسٹور سے چار کارکنوں کو اغوا کرنے کے الزامات کا سامنا ہے۔

حکام کے مطابق چھ دیگر افراد کو اس فراڈ میں ملوث ہونے پر گرفتار کیا گیا تھا۔

"انسداد بلیک میلنگ"

"پولٹری اور ایگز کی کمپنیوں کے خلاف دھاندلی سے جرائم پیشہ گروہوں کو تقریباً 47 ملین ڈالر کا نقصان ہوا"۔ حکام نے کہا کہ360 ملین میکسیکن پیزو کی عدم وصولی کے نتیجے میں 20.5 ملین آسٹریلوی پاؤنڈز مالیت کی 24 جائیدادیں ضبط کر لی گئیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں