ایک ہی فضائی کمپنی کے دوسرے طیارے سے نکلنے والے سانپ نے مسافروں میں دہشت پھیلا دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

تھائی لینڈ کے دارالحکومت بنکاک سے سیاحتی جزیرے فوکٹ جانے والی مقامی پرواز کے مسافروں کو سامان کے اوپری حصے میں زندہ سانپ ملنے کے بعد خوف و ہراس کا سامنا کرنا پڑا۔

ایئر ایشیا نے ایک بیان میں کہا ہے کہ وہ اس حادثے سے آگاہ ہے جو فلائٹ FD3015 پر پیش آیا، یہ مسافر جہاز 13 جنوری کو بنکاک کے ڈان میوانگ بین الاقوامی ہوائی اڈے سے روانہ ہوا۔

امریکی CNN نیٹ ورک کی طرف سے رپورٹ کیا گیا ہےطیارے سے اچانک اس وقت سانپ نکل آیا جب وہ پرواز کررہا تھا۔

کمپنی کے بیان میں یہ بھی کہا گیا کہ طیارہ بغیر کسی واقعے کے لینڈ کر گیا اور زمین پر متعلقہ انجینیرنگ اور سیفٹی ٹیموں نے فوری طور پر اس کی جانچ کی۔

کمپنی کے سیفٹی ڈیپارٹمنٹ کے سربراہ فل بمبوانگ نے تصدیق کی کہ یہ ایک "نادر" حادثہ تھا۔ اس نے ایک بیان میں مزید کہا کہ "فوکیٹ ایئرپورٹ پر اترنے سے پہلے فلائٹ اٹینڈنٹ کو اطلاع دی گئی،جب ایک مسافر نے ایک چھوٹا سانپ دیکھا‘‘۔

انہوں نے مزید کہا کہ "اس قسم کے حادثے سے نمٹنے کے لیے عملہ اچھی طرح سے تربیت یافتہ تھا۔ انہوں نے احتیاط کے طور پر مسافروں کو کچھ نشستوں سے ہٹا دیا"۔

فاؤل نے مزید کہا کہ "اس نوعیت کے واقعے کے لیے معیاری طریقہ کار کے مطابق ہوائی جہاز نے فلائٹ آپریشن دوبارہ شروع کرنے سے پہلے گہری صفائی کے عمل سے گذرا"۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں