گولہ بارود کے بغیر غیر معمولی طاقت کا حامل ایک لیزر ہتھیار جنگ کا رخ موڑ دے گا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

موجودہ بارود کے خطرناک ہتھیاروں سے ہونے والی جنگوں کی تباہی کے بعد ایسے لگتا ہے کہ دنیا غیر روایتی اور جدید اسلحے کےایک نئے دور میں داخل ہونے والی ہے۔ یہ نیا اسلحہ بارود کے بجائے لیزر گائیڈڈ ہتھیاروں کا ہوگا۔

اس حوالے سے پہلی بار صرف 10 پاؤنڈ کی لاگت سے ہائی انرجی لیزر گائیڈڈ ہتھیار کو کامیابی سے لانچ کیا گیا جو مستقبل میں جنگ کا رخ موڑ دے گا اور میدان جنگ میں انقلاب برپا کر دے گا۔

اعلیٰ طاقت والے ڈریگن فائر ہتھیار کو ایم او ڈی کی ہیبرائیڈز رینج میں آزمائش کے دوران فضائی اہداف کے خلاف کامیابی سے فائر کیا گیا، جو کہ برطانیہ میں اپنی نوعیت کا پہلا تجربہ ہے۔

برطانوی اخبار ”دی ٹیلی گراف“ کی شائع کردہ رپورٹ کے مطابق یہ ہتھیار برطانوی کمپنی کائنیٹک تیار کر رہی ہے جو میزائلوں، ڈرونز اور دشمن کے دیگر اہداف کو نشانہ بنانے کے لیے تیار کیا جا رہا ہے۔

بارود کی ضرورت ختم

نئے ہتھیار کو بھی کسی گولہ بارود کی ضرورت نہیں ہے، کیونکہ یہ برقی توانائی کا استعمال کرتے ہوئے کام کریں گے۔ اسے ایک ایسے وقت میں نیا جنگی ہتھیار سمجھا جا رہا ہے جب یوکرین میں روس اورمغرب کی جنگ میں نئے ہتھیاروں کی طلب بڑھ رہی ہے۔

اگرچہ نئے ہتھیار کی رینج ابھی تک خفیہ ہے لیکن یہ کسی بھی دکھائی دینے والے ہدف کو نشانہ بنا سکتا ہے اور اس کی درستگی ایسی ہے جیسے ایک کلومیٹر کے فاصلے سے ایک سکے کو نشانہ بنایا جائے۔

ایم او ڈی نے کہا کہ ٹیسٹوں نے متعلقہ حدود میں فضائی اہداف کو شامل کرنے کی صلاحیت کا مظاہرہ کیا۔ یہ اس ٹیکنالوجی کو جنگ کی طرف لانے کی طرف اہم قدم ہے اور برطانوی فوج اور رائل نیوی اس کا مطالعہ کر رہی ہے۔

"میدان جنگ میں انقلاب"

برطانوی وزیر دفاع گرانٹ شیپس نے وضاحت کی کہ "اس قسم کا جدید ہتھیار مہنگے گولہ بارود پر انحصار کم کرکے میدان جنگ میں انقلاب برپا کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے، ساتھ ہی ساتھ یہ باہمی نقصان کے خطرے کو بھی کم کرتا ہے۔"

انہوں نے مزید کہا کہ اس طرح کی جدید ٹیکنالوجیز "انتہائی مسابقتی دنیا میں اہم ہیں" اور اس نے برطانیہ کو "جنگ میں فتح حاصل کرنے اور قوم کو محفوظ رکھنے" میں مدد دی۔

یہ قابل ذکر ہے کہ لیزر ڈائریکٹڈ انرجی ہتھیار روشنی کی رفتار سے اہداف کو نشانہ بنا سکتے ہیں۔ یہ ہدف کو تباہ کرنے کے لیے روشنی کی شدید شہتیر کا استعمال کر سکتے ہیں، جس سے ساختی ناکامی یا اگر وار ہیڈ کو نشانہ بنایا جاتا ہے تو زیادہ ڈرامائی نتائج برآمد ہوتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں