افریقی کپ جنسی اسکینڈل کی زدمیں،سیکورٹی اہلکاروں پر خواتین شائقین کی ہراسانی کاالزام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سوشل میڈیا پر گردش کرنے والی ویڈیوز نے کوٹ ڈیوائر میں ایک اسٹیڈیم سکیورٹی اہلکارکی جانب سے خواتین کے ساتھ بدسلوکی کے واقعےنے بڑے پیمانے پر ردعمل کو جنم دیا ہے۔ ہسپانوی اخبار’مارکا‘ کے مطابق فٹبال اسٹیڈیم میں داخل ہونے سے قبل خواتین کی اس طرح تلاشی لی جاتی ہے جسے شرمناک اور ہراسانی کے کے طور پر بیان کیا جا سکتا ہے۔

ہسپانوی اخبارنے کہا کہ خواتین کو ہراساں کرنے سے سوشل میڈیا پر تنقید کی لہر دوڑ گئی۔ یہ شرمناک اور مضحکہ خیز ہے اور اس کی مذمت کی جانی چاہیے۔ بدقسمتی کی بات یہ ہے کہ کوئی شخص جو اسٹیڈیم اور شائقین کی حفاظت کے لیے تعینات کیاجا تا ہے وہ خواتین کو چھونے کے لیے اپنے اختیارات کا ناجائز استعمال کر رہا ہے۔

"مارکا" نے مزید لکھا کہ گردش کرنے والی ایک ویڈیو میں سٹیڈیم کے ایک سکیورٹی اہلکار کو ان اسٹیڈیم تک پہنچنے کی کوشش کرنے والی خواتین کے حساس حصوں کو چھوتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔ تاہم یہ خواتین اس نا مناسب رویے پر مزاحمت سے گریزاں ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں