خدا سے الہام ہوا کہ رقم زیادہ ہو گی: امریکی پادری کا کروڑوں ڈالر کا کرپٹو کرنسی فراڈ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکہ کے ایک پادری اور اس کی بیوی پر کروڑوں ڈالر کی کرپٹو کرنسی اسکیم میں سینکڑوں مقامی عیسائیوں کو دھوکہ دینے کا الزام عائد کیا گیا ہے۔

کولوراڈو کے پادری جس پر کرپٹو کرنسی اسکیم میں اپنی مسیحی برادری سے 10 لاکھ ڈالر سے زیادہ کی چوری کا الزام عائد کیا گیا ہے، نے فراڈ کا اعتراف کیا ہے، لیکن دلیل دی کہ اسے خدا نے ایسا کرنے کی ہدایت کی تھی۔

ایلی ریگالڈو اور ان کی اہلیہ، کیٹلن، نے اپنی تخلیق کردہ آن لائن کریپٹو کرنسی ایکسچینج کے ذریعے مقامی عیسائیوں کو جھانسہ دیا کہ خدا نے اسے بتایا ہے کہ اگر لوگ سرمایہ کاری کریں گے تو وہ امیر ہو جائیں گے۔

استغاثہ کے مطابق، یہ کرپٹو اسکیم حقیقت میں "عملی طور پر بیکار" تھی، جس میں سرمایہ کاروں کو لاکھوں ڈالر کا نقصان ہوا جبکہ ریگالڈو نے اس رقم کو شاہانہ طرز زندگی کے لیے استعمال کیا۔

الزامات کے بارے میں ایک ویڈیو بیان میں، ایلی نے اعتراف کیا کہ جوڑے نے 1.3 ملین ڈالر ضائع کیے جو کرپٹو کرنسی کے ذریعے جمع کیے گئے۔

ریگالڈو نے کہا کہ ان کا منصوبہ خدا کی طرف سے الہام ہوا۔

پادری نے دعوی کیا کہ رقم کا آدھا حصہ ان کے گھر کو دوبارہ تعمیر پر صرف ہوا جسے رب نے ہمیں کرنے کے لیے کہا"

انہوں نے کہا کہ منصوبے کی کامیابی کے لیے" ہم خدا کی جانب سے معجزے کا انتظار کر رہے ہیں۔"

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں