خاتون اول کا ہینڈ بیگ اسکینڈل، جنوبی کورین صدر مشکل میں پھنس گئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

جنوبی کوریا کے صدر کو خاتون اول کے ایک مبینہ قیمتی ہینڈ بیگ کا تحفہ وصول کرنے پر مشکلات اور عوامی حلقوں میں تنقید کا سامنا ہے۔

برطانوی اخبار ’ٹیلی گراف‘ کے مطابق جنوبی کوریا کے صدراس وقت دباؤ میں آئے جب ان کی اہلیہ کی جانب سے ایک پادری سے ڈیور برینڈ کا ہینڈ بیگ لیتے ہوئے تصویر سامنے آئی ہے۔ اس پادری کو جوہری ہتھیاروں سے لیس شمالی کوریا کے ساتھ قریبی تعلقات کے لیے جانا جاتا ہے۔

خفیہ کیمرے کی فوٹیج جس میں کم کیون ہی کو 2,250 ڈالر مالیت کا بیگ بطور تحفہ قبول کرتے ہوئے دکھایا گیا ہے۔ اسے مقامی میڈیا نے "ڈیور بیگ اسکینڈل" کا نام دیا ہے۔

جنوبی کوریا کے صر اور ان کی اہلیہ
جنوبی کوریا کے صر اور ان کی اہلیہ

اس اسکینڈل سے یون سک یول کی قیادت میں قدامت پسند "پیپل پاور" پارٹی کی اپریل میں ہونے والے آئندہ انتخابات میں قومی پارلیمان میں اکثریت حاصل کرنے کی کوششوں کو نقصان پہنچنے کا خطرہ ہے۔

پارٹی کے کچھ ارکان نے صدر اور ان کی اہلیہ پر زور دیا کہ وہ اس واقعےپر قوم سے معافی مانگیں اور یہ تسلیم کریں کہ تحفے میں بیش قیمت بیگ وصول کرنا نامناسب تھا۔

یون ہاپ نیوز ایجنسی کے مطابق یون اس بات پر غور کر رہے تھے کہ آیا ذاتی طور پر ٹیلی ویژن انٹرویو میں اس مسئلے سے متعلق خدشات کو دور کیا جائے۔

جنوبی کورین صدر ااور ان کی اہلیہ برطانوی فرمانروا کے ہمراہ
جنوبی کورین صدر ااور ان کی اہلیہ برطانوی فرمانروا کے ہمراہ

جنوبی کوریا کے صدر نے کہا کہ ان کی اہلیہ کم کو سیاسی طور پربدنام کرنے اور خفیہ کیمرے کے ذریعے تصویرلے کران کی ساکھ کو خراب کرنے کی منظم کوشش کی گئی۔

ان کے دفتر نے ٹیلی گراف کو بتایا کہ ان کے پاس اس حوالے سے مزید معلومات نہیں ہیں۔

یہ الزامات پہلی بار نومبرمیں اس وقت سامنے آئے تھے جب ایک یوٹیوب چینل نے کورین امریکی پادری ابراہم چوئی کی ستمبر 2022 میں ایک میٹنگ کے دوران کم کو ہینڈ بیگ کی پیشکش کی خفیہ ریکارڈنگ نشر کی تھی۔

پادری چوئی شمالی کوریا کی وکالت کرتے رہے ہیں۔ اس نے دعویٰ کیا کہ اس نے ابتدا میں پیانگ یانگ کے بارے میں یون کی سخت گیر پالیسی کے بارے میں اپنے خدشات کا اظہار کیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ ممکنہ لگژری تحائف کے بارے میں کم کے ساتھ پچھلی بات چیت نے انہیں یقین دلایا کہ اس طرح کی پیشکش خاتون اول سے ملاقات میں مددگار ثابت ہو سکتی ہیں۔

پادری چوئی نے کہا کہ وہ انتظامیہ میں اپنے کردار کے بارے میں فکر مند ہو گئے اور بائیں بازو کی خبریں اور تبصرے نشر کرنے والے یوٹیوب چینل پر ایک رپورٹر کے ساتھ کام کیا، تاکہ وہ دوسرے دورے کے دوران مہنگے بیگ کو قبول کرتے ہوئے فلم بنائے۔

مقامی میڈیا نے ایک نامعلوم صدارتی اہلکار کے حوالے سے بتایا ہے کہ جوڑے کو پیش کیے گئے تحائف کو سرکاری املاک کے طور پر رکھا جاتا ہے اور محفوظ کیا جاتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں