بھارت دُنیا کی تیسری سب سے بڑی معیشت بننے کی راہ پر گامزن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

بھارتی وزارت خزانہ اس ہفتے کے آخر میں ایک عبوری بجٹ پیش کرنے کی تیاری کررہی ہے۔ ہندوستان 2027ء تک 5 ٹریلین کی جی ڈی پی کے ساتھ دنیا کی تیسری سب سے بڑی معیشت بن سکتا ہے۔

پیرکو جاری کردہ ایک رپورٹ میں وزارت خزانہ نے کہا ہے کہ مالی سال 2024ء میں معیشت 7 فیصد یا اس سے زیادہ ترقی کرنے کے لیے تیار ہے۔ ہندوستان کا مالی سال 1 اپریل سے شروع ہوتا ہے اور 31 مارچ کو ختم ہوتا ہے۔

اگریہ اس سال کا ہدف حاصل کر لیتا ہے، تو یہ مسلسل تیسرا سال ہو گا جب ہندوستان میں جی ڈی پی میں 7 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

ملک کی جی ڈی پی اس وقت 3.7 ٹریلین ڈالر ہے،حکومت کا 2047ء تک ترقی یافتہ ملک بننے کا بھی ہدف ہے۔

گولڈمین سیکس کے مطابق ہندوستان 2075ء تک دنیا کی دوسری سب سے بڑی معیشت بننے کے لیے تیار ہے۔ انڈیا نہ صرف جاپان اور جرمنی بلکہ امریکہ کو بھی پیچھے چھوڑنے کےلیے تیار ہے۔

بھارت اس وقت امریکا، چین، جاپان اور جرمنی کے بعد دنیا کی پانچویں بڑی معیشت ہے۔

نیو ویژن ویلتھ مینجمنٹ کے شریک بانی اور سی ای او ڈاکٹر ریان لیمنڈ ہندوستان کو "مستقبل کا چین" کے طور پر بیان کرتے ہیں۔ ہندوستان مغرب کی طرف سیاسی تبدیلی کا مشاہدہ کر رہا ہے، جس کی نمائندگی امریکہ اور یورپ کرتے ہیں۔

العربیہ بزنس کے ساتھ ایک سابقہ انٹرویو میں لیمنڈ نے کہا کہ ہندوستان نے دو محوروں پر توجہ دے کر سرمایہ کاروں کے لیے اپنی کشش کو بڑھایا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں