فرانس میں ’ہاررہاؤس‘ گھر کی فریج سے 100 مردہ بلیاں برآمد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

فرانسیسی پولیس نے ملک میں ایک گھر کا پتا چلایا ہے جس میں اسے ایک فریج سے 100 سے زیادہ مردہ بلیاں ملی ہیں۔

برطانوی اخبار میٹرو کی طرف سے شائع ہونے والی تفصیلات العربیہ ڈاٹ نیٹ کی معلومات میں آئی ہیں۔ تفصیلات کے مطابق پولیس کو جنوبی فرانس کے شہرکانز کے قریب لا روکیٹ- سرسگنی کے قصبے میں بلایا گیا، جب جانوروں کے تحفظ کے ایک گروپ نے ایک مکان کے اندر سے فریج میں رکھی گئی دسیوں مردہ بلیاں دریافت کیں.

جب افسران نے اس گھر کے اندر کا فریج کھولا تو انہیں اندر درجنوں مردہ بلیاں ملیں۔

اس جگہ پر رہنے والے 66 سالہ شخص نے بتایا کہ وہ اپنی بلیوں سے محبت کرتا ہے اور انہیں ہمیشہ کی زندگی دینا چاہتا ہے۔ اس لیے اس نے اپنے فریج میں مرنے والی ہر بلی کو گھر میں رکھا۔

پولیس نے اس معاملے کی تحقیقات سے واقف ایک ذریعے نے کہا کہ "اس شخص کو نہیں لگتا تھا کہ اس نے کچھ غلط کیا ہے۔ اسے یقین تھا کہ اس نے بلیوں کو سلا دیا ہے"۔

فرانسیسی جانوروں کے تحفظ کے گروپ کے لیے کام کرنے والے کارکنوں نے انکشاف کیا کہ اس شخص کے گھر کے اردگرد 38 دیگر بلیاں، جن میں 12 بلی کے بچے اور ایک حاملہ بلی بھی زندہ دریافت ہوئی۔ ان میں سے کچھ زخمی اور کچھ غذائی قلت کا شکار تھیں۔

ایک ذریعے نے کہا کہ "بلیاں برسوں سے گندے آدمی کے گھر میں رہ رہی تھیں اور وہ سب کی حالت بہت خراب تھی"۔

انہوں نے مزید کہا کہ "یہ ایک حقیقی خوفناک گھر تھا۔ باغ میں دوسری بلیاں دفن پائی گئیں"۔

اس گھر میں رہنے والے شخص کو گذشتہ منگل کو گرفتار کیا گیا تھا۔ عدالتی طریقہ کار کے تحت رہا کرنے سے پہلے اس سے رات بھر پوچھ گچھ کی گئی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں