فلسطین اسرائیل تنازع

امریکہ اور دیگر اتحادی اسرائیل کو اسلحہ دینا بند کر دیں: جوزپ بوریل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

یورپی یونین کے خارجہ پالیسی کے سربراہ جوزپ بوریل نے مطالبہ کیا ہے کہ امریکہ اور امریکی و اسرائیلی اتحادی اسرائیل کو اسلحہ بھیجنا بند کر دیں کیونکہ ان کے بھیجے ہوئے اسلحے سے بہت زیادہ لوگوں کی ہلاکتیں ہو رہی ہیں۔ '

جوزپ بوریل نے یہ مطالبہ پیر کے روز کیا ہے۔ واضح رہے ہالینڈ کی ایک مقامی عدالت نے انسانی حقوق گروپوں کی استدعا پر ہالینڈ کی حکومت کو حکم دیا ہے کہ وہ جنگی طیاروں کے فاضل پرزوں کی فراہمی روک دے۔

ہالینڈ اسرائیل کے لیے امریکی ساختہ جنگی بمباری طیارے ایف 35 طیاروں کے فاضل پرزے فراہم کرتا ہے۔ کہ امریکی ساختہ طیاروں کا کاروبار ہالینڈ میں کیا جاتا ہے۔ یہ عدالتی فیصلہ پانچویں مہینے میں داخلی جنگی طیاروں کی مسلسل بمباری سے 28 ہزار فلسطینیوں کی ہلاکت کے بعد سامنے آیا ہے۔

یورپی یونین کے خارجہ پالیسی کے سربراہ نے بھی اسلحے کی مسلسل جاری ترسیل کو روکنے کا کہا ہے۔ ان کا کہنا تھا' کیا یہ منطقی نہیں ہے کہ جب اسرائیل ' اونروا' کے سربراہ فلپ لارازینی کو اسرائیل کی جانب سے دھمکیاں دی جا رہی ہیں۔'

انہوں نے کہا ' آپ کب تک یہ سنتے رہنا چاہتے ہیں کہ دنیا کے اہم رہنما اور وزرائے خارجہ یہ کہتے رہیں کہ غزہ میں اتنی بڑی تعداد میں فلسطینی ہلاک ہو گئے ہیں۔' جوزپ بوریل نے اسرائیلی وزیر اعظم نیتن یاہو کے اس بیان کی مذمت کی ہے کہ ' رفح سے دس لاکھ سے زائد بے گھر فلسطینیوں کو نکال دیا جائے۔ '

یورپی یونین کے رہنما طنزیہ انداہ میں استفسار کیا ' ان فلسطینی بے گھروں کو رفح سے نکال کر کہاں بھیجا جائے۔ کیا انہین چاند پر منتقل کیا جانا چاہیے، اسرائیل ان فلسطینیوں کو کہاں بھیجنا چاہتا ہے۔'

مقبول خبریں اہم خبریں