امتحانی ہالز میں سعودی ثقافتی لباس پہن کر یوم تاسیس پر اظہار مسرت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے سکولوں میں ملک کے یوم تاسیس 22 فروری کی مناسبت سے بچوں کی امتحانات کے لیے روایتی لباس میں آمد دیکھی جا رہی ہے۔ رواں سال یوم تاسیس کا عنوان 'من يوم بدينا' یعنی جس دن سے ہم موجود ہیں رکھا گیا ہے۔

جدہ کے مختلف سکولوں میں طالب علم امتحانات کے لیے سعودی ثقافتی لباس پہن کر حاضر ہوئے۔

اس موقع پر ایک طالب علم فیصل العمری نے کہا کہ وہ اس عظیم دھرتی سے تعلق رکھنے والے اپنے آباؤ اجداد کا لباس پہن کر خوشی محسوس کر رہا ہے۔

یوم تاسیس کے موقع پر طالبات
یوم تاسیس کے موقع پر طالبات

عبدالالہ الشہرانی کا کہنا تھا ثقافتی لباس پہننا بذات خود باعث فخر ہے۔ طالب علم نے مزید کہا کہ انہوں نے گزشتہ ہفتے یوم تاسیس کی مناسبت سے ہونے والے پروگرامز میں قومی ثقافتی لباس کے متعلق کافی معلومات حاصل کیں۔

واضح رہے یوم تاسیس کی مناسبت سے سکولز میں گزشتہ ہفتے پروگرامز منقعد کیے گئے تھے جو بدھ کے روز اختتام پذیر ہوں گے، جبکہ سرکاری طور پر یوم تاسیس 22 فروری بروز جمعرات منایا جائے گا۔

یوم تاسیس
یوم تاسیس

علاوہ ازیں جدہ میں سکول ٹیچر علی الزھرانی نے کہا کہ امتحانی ہالز میں ثقافتی لباس کی تشہیر طلبہ کی دلوں میں وطن سے لگاؤ کے جذبے کو بڑھانے میں معاون ہوگی۔

اس حوالے سے عثمان ہادی کا کہنا تھا کہ یوم تاسیس کی مناسبت سے مدارس میں ہونے والی سرگرمیوں میں طلبہ نے بھرپور حصہ لیا اور مختلف علاقائی اور ثقافتی پروگرامز میں شریک ہوئے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں