فلسطین اسرائیل تنازع

غزہ کی صورتحال کو تبدیل ہونا چاہیے: برطانوی وزیر خارجہ کی بینی گینٹز سے گفتگو

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

برطانوی وزیر خارجہ ڈیوڈ کیمرون نے اسرائیلی جنگی کونسل کے رکن بینی گینٹز سے ملاقات کے اختتام پر غزہ کی پٹی میں حالات میں "بہتری" نہ ہونے پر تشویش کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا کہ اسرائیل اور حماس کے درمیان جنگ کی وجہ سے غزہ کا علاقہ انسانی بحران کا شکار ہے اور صورت حال تبدیل نہ ہونا باعث تشویش ہے۔

"صورت حال کو بدلنا ہوگا"

ڈیوڈ کیمرون نے اسرائیلی لیڈر سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ’غزہ میں صورت حال کو اب بدلنا ہوگا‘۔

بعد ازاں انہوں نے’X‘ پلیٹ فارم پر کہا کہ برطانیہ کو "رفح میں فوجی حملے کے امکان پر گہری تشویش ہے"۔

'مشکل مگر با معنی بات چیت'

انہوں نے کہا کہ "بینی گینٹز کے ساتھ ملاقات کے دوران میں نے واضح طور پر ان اقدامات کا ذکر کیا جو اسرائیل کو غزہ کی امداد بڑھانے کے لیے اٹھانا ہوں گے‘‘۔ انہوں نے وزیر اعظم بنجمن نیتن یاہو کے سیاسی حریف کے ساتھ بات چیت کو مشکل لیکن ضروری قرار دیتے ہوئے کہا کہ بین الاقوامی سطح پر اسرائیل پر دباؤ بڑھ رہا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ "ہم نے ان کوششوں پر تبادلہ خیال کیا جو انسانی ہمدردی کی بنیاد پر جنگ بندی تک پہنچنے کے لیے کی جانی چاہئیں تاکہ یرغمالی بہ حفاظت اپنے گھروں کو واپس جا سکیں اور ضروری سامان غزہ منتقل کیا جا سکے۔

کیمرون اوربینی گینٹز نے رفح میں فوجی حملے کا امکان پر بھی بات کی۔ اسرائیل رفح میں فوجی آپریشن کو حماس کے خلاف جنگ میں ناگزیر قراردیتا ہے۔ تاہم رفح میں جہاں لاکھوں بے گھر فلسطینی جمع ہیں فوجی کارروائی پر تشویش ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں