مارکیٹنگ کے لیے بچوں کا استحصال غیرقانونی ہے:سعودی ہیومن ریسورسز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی انسانی وسائل اور سماجی ترقی کی وزارت نے چائلڈ پروٹیکشن سسٹم کے آرٹیکل تین اور اس کے انتظامی ضوابط کی بنیاد پر بچوں کے تحفظ اور تجارتی اور اشتہاری مارکیٹنگ کے مقاصد اور اس طرح کی دیگر سرگرمیوں کے لیے بچوں کے استحصال سے سختی سے گریز کی ضرورت پر زور دیا ہے۔

بچوں کی حفاظت ناگزیر

وزارت برائے انسانی وسائل نے جمعہ کو ایک بیان میں کہا کہ اس نظام کا مقصد بچوں کو بڑے ہجوم کے سامنے آنے کے خطرات سے بچانا ہے جو ان کی نشوونما کے مراحل کو منفی طور پر متاثر کرتے ہیں۔

بیان میں اس بات پر زور دیا گیا کہ بچوں کو مارکیٹنگ کے لیے استعمال کرنے سے ان میں تناؤ اور اضطراب کی کیفیت پیدا ہوسکتی ہے۔

یہ نوٹس وزارت انسانی وسائل کی جانب سے چند غیر منافع بخش اداروں کی نگرانی کے بعد جاری کی گئی رپورٹ کے بعد سامنےآیا ہے جو رمضان میں فنڈ ریزنگ کی سرگرمیوں اور مارکیٹنگ اشتہاری مہموں میں بچوں کو استعمال کرتے ہیں۔

خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف قانونی اقدامات

وزارت برائے انسانی وسائل تجارتی مقاصد کے لیے بچوں کے استحصال سے متعلق خلاف ورزیوں کا پتہ لگانے کی بھی تصدیق کی۔ بیان میں کہا گیا ہےکہ اس طرح بچوں کے تحفظ کے نظام اور اس کے انتظامی ضوابط کی خلاف ورزی ہوتی ہے۔

اس تناظرمیں وزارت نے زور دیا کہ وہ اس بارے میں قانونی اقدامات اٹھائے گی تاکہ چائلڈ پروٹیکشن سسٹم کو فعال رکھا جا سکے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں