جہاد اسلامی وفد سے ملاقات، ایران نے غلطی سے فلسطین کی جگہ سوڈان کا پرچم رکھ دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

فلسطین میں تحریک اسلامی جہاد کے سکریٹری جنرل زیاد النخالہ کے دورہ ایران کے دوران ایرانی وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان کے ساتھ ملاقات میں ایرانی انتظامیہ نے غلطی سے فلسطینی پرچم کی جگہ سوڈانی پرچم رکھ دیا۔

ایرانی حکام کے ساتھ تحریک اسلامی جہاد کے وفد کی مشترکہ تصاویر میں ایرانی پرچم دکھایا گیا۔، دوسری جانب فلسطینی پرچم کے بجائے سوڈانی پرچم تھا۔ تاہم بعد میں دیگر مواقع پر تصاویر میں فلسطینی جھنڈا کی تصویریں ہی نظر آئیں۔ زیاد النخالہ کی حسین امیر کے ساتھ کھڑے ہونے کی تصویر میں بھی فلسطینی پرچم کی دکھائی دیا۔

زیاد النخالہ نے اپنے دورہ ایران کے دوران امیر عبداللہیان سے ملاقات کی جس میں غزہ کی جنگ کی تازہ ترین پیش رفت پر تحقیق کرنا شامل تھا۔ النخالہ نے ایرانی وزیر خارجہ کے ساتھ ملاقات کے دوران فلسطینی پوزیشن کو واضح کرنے میں ایرانی سفارتکاری کے کردار کی اہمیت پر بھی زور دیا۔ انہوں نے ایرانی حمایت کی تعریف کی اور ہر سطح پر تعاون جاری رہنے پر زور دیا۔

چند روز قبل حماس کے پولیٹیکل بیورو کے سربراہ اسماعیل ہنیہ ایران پہنچے تھے جہاں انہوں نے غزہ جنگ کی پیش رفت پر تبادلہ خیال کے تناظر میں کئی ملاقاتیں کی تھیں۔ ایرانی رہبر اعلیٰ آیت اللہ علی خامنہ ای کے ساتھ ملاقات کے دوران حماس کے رہنماؤں کی ایک تصویر نمایاں ہوئی تھیں جس میں دیکھا گیا تھا کہ حماس کے وفد کے ارکان نے جوتے نہیں پہنے ہوئے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں