بائیڈن نے یاہو کو اسرائیلی وفد کو معاہدے تک پہنچنے کا اختیار دینے کا کہا ہے: جان کربی

امداد کی ترسیل کی کامیابی کا اندازہ غزہ میں زمینی صورتحال میں بہتری سے لگایا جائے گا: انٹونی بلنکن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

وائٹ ہاؤس کی قومی سلامتی کونسل کے ترجمان جان کربی نے ’’العربیہ‘‘ کو بتایا امریکی صدر جو بائیڈن نے اسرائیلی وزیر اعظم نیتن یاہو سے کہا ہے کہ وہ اسرائیلی وفد کو معاہدے تک پہنچنے کا اختیار دیں۔

جان کربی نے العربیہ اور الحدث کے نامہ نگار سے گفتگو میں مزید کہا وائٹ ہاؤس کئی مہینوں سے یرغمالیوں کی رہائی کے لیے ہر ممکن کوشش کر رہا ہے۔ معاہدے کو مکمل کرنے میں وائٹ ہاؤس کی جانب سے کوئی غفلت یا ناکامی نہیں ہوئی۔ ترجمان نے زور دے کر کہا ان کا ملک یرغمالیوں کو آزاد کرانے تک پیچھے نہیں ہٹے گا۔

ایک متعلقہ سیاق و سباق میں امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے کہا کہ امریکہ غزہ میں مزید انسانی امداد کے داخلے کی اجازت دینے کے لیے اسرائیل کی حالیہ کوششوں کا خیرمقدم کرتا ہے۔ تاہم انہوں نے کہا زمین پر کامیابی کا اندازہ غزہ کی بہتر صورتحال کے نتائج سے لگایا جائے گا۔

ورلڈ سینٹرل کچن کے امدادی قافلے پر اسرائیلی حملے میں سات امدادی کارکنوں کے مارے جانے کے حوالے سے بلنکن نے کہا ہم احتساب کو دیکھنے کے منتظر ہیں۔ اسرائیل کی ذمہ داری ہے کہ وہ شہریوں کے تحفظ کے لیے کوششوں کو زیادہ سے زیادہ بہتر بنائے۔

یاد رہے اسرائیل نے جمعہ کو اعلان کیا تھا کہ وہ عارضی طور پر انسانی امداد کو اپنی سرحد کے ذریعے شمالی غزہ تک پہنچنے کی اجازت دے گا۔ سات اکتوبر کے حملے کے بعد پہلی مرتبہ ایریز کراسنگ کو دو بارہ کھولا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں