اسرائیلی فوج کا غزہ میں حماس کو رقوم کی منتقلی میں ملوث ایجنٹ کو ہلاک کرنے کا دعویٰ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیلی فوج نے کہا ہے کہ اس نے رفح شہر میں حماس کے ایک اہم فنانسر کو ہلاک کر دیا ہے جس کی شناخت ناصر یعقوب جابر نصرکے نام سے کی گئی ہے۔

فوج کے ترجمان اویچائی ادرعی نے کہا کہ اسرائیلی ڈیفنس فورسز اور جنرل سکیورٹی سروس [شین بیت] نے ایک مشترکہ آپریشن میں ایسے عنصر کو ہلاک کیا جو رفح میں حماس کے عسکری ونگ کے لیے ایک اہم کیشیئر کے طور پر کام کرتا تھا۔

انہوں نے کہا کہ نصر نے گذشتہ دسمبر میں فوجی سرگرمیوں کے مقصد کے لیے لاکھوں ڈالر منتقل کیے تھے۔

جبکہ حماس نے ابھی تک اس اعلان پر کوئی تبصرہ نہیں کیا ہے۔

رفح پر حملہ

گذشتہ روز اسرائیلی وزیر خزانہ بیزلیل سموٹریچ نے اسرائیلی نشریاتی ادارے کو بیانات میں کہا تھا کہ اسرائیلی فوج حماس کے بریگیڈ کو ختم کرنے اور غزہ کی پٹی میں اس کی فوجی موجودگی کو ختم کرنے کے لیے رفح میں داخل ہونے کی تیاری کر رہی ہے۔

اسرائیلی آرمی ریڈیو نے جمعرات کو اطلاع دی کہ فوجی آپریشن کا آغاز نصیرات کیمپ کے مضافات میں چھاپوں کے ایک سلسلہ سے ہوا۔

گذشتہ ہفتوں کے دوران رفح کا مسئلہ واشنگٹن اور تل ابیب کے درمیان تنازع اور تناؤ کا باعث بنا ہوا ہے۔

امریکی انتظامیہ نے بنجمن نیتن یاہو کی سربراہی میں اسرائیلی حکومت پر زور دیا کہ وہ وسیع حملے کا خیال ترک کر دیں جب کہ اسرائیل کی انتہا پسند حکومت بے گھر لوگوں سے بھرے شہر میں وسیع فوجی کارروائی کے لیے پرعم ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں