امریکی وزیر خارجہ مشرق وسطیٰ کے دورے کے دوران اردن اور اسرائیل کا دورہ کریں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن کل منگل اور بدھ کو مشرق وسطیٰ کے ممالک کا دورہ کریں گے جہاں وہ اردن اور اسرئیل بھی جائیں گے۔

امریکی محکمہ خارجہ نےایک بیان میں کہا ہے کہ امریکی صدر جو بائیڈن اور اسرائیلی وزیر اعظم بنجمن نیتن یاہو کے درمیان فون پر جنگ بندی مذاکرات پر تبادلہ خیال کیا اور حماس کے ہاں قید اسرائیلیوں کی رہائی کے لیے کی جانے والی کوششوں پر تبادلہ خیال کیا۔

محکمہ خارجہ کے ایک اہلکار نے بلنکن کے دورے کی تصدیق کی۔ بلنکن کا طیارہ اتوار کو آئرلینڈ میں ایندھن بھرنے کے لیے اترا تھا جب وہ طے شدہ دورے کے لیے سعودی عرب جا رہے تھے۔

کئی مہینوں سے مصر، قطر اور امریکہ اسرائیل اور حماس کے درمیان ایک نئی جنگ بندی کے لیے ثالثی کی کوشش کر رہے ہیں، جس میں ایک معاہدے تک پہنچنے کے لیے عوامی دباؤ بڑھ رہا ہے۔

بائیڈن نے اسرائیل کی جانب سے رفح میں آپریشن شروع کرنے کے خدشات کا بھی اعادہ کیا جہاں دس لاکھ سے زائد فلسطینی پناہ لیے ہوئے ہیں۔

امریکی محکمہ خارجہ نے فوری طور پر ان دونوں دوروں کے بارے میں تفصیلات نہیں بتائیں۔

محکمہ خارجہ کے ترجمان میتھیو ملر نے اپنے سعودی عرب کے دورے کے حوالے سے ایک سابقہ بیان میں کہا تھا کہ بلنکن کی کوششوں میں غزہ میں جنگ بندی تک پہنچنے پر مرکوز ہوں گی۔ انہوں نے کہا کہ حماس فلسطینی عوام اور جنگ بندی کے درمیان رکاوٹ کے طور پر کھڑی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں