طلبہ کے خلاف سکیورٹی فورسز کی کارروائیوں پر انسانی حقوق سربراہ کا اظہار تشویش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کمیشن کے سربراہ وولکر ترک نے کہا ہے کہ وہ امریکی یونیورسٹیوں میں فلسطینیوں کے حامی اور جنگ مخالف طلبہ مظاہرین کے خلاف امریکی سکیورٹی فورسز کی کارروائیوں پر اضطراب کا شکار ہیں ۔

وولکر ترک نے اس تشویش کا اظہار پچھلے دنوں سے امریکی تعلیمی اداروں میں غزہ جنگ کو روکنے کے لیے احتجاج کرنے والے طلبہ مظاہرین کے بارے میں بات کرتے ہوئے کیا ہے۔ امریکی یونیورسٹوں میں ان مظاہرین میں سے سینکڑوں کو گرفتار کیا جا چکا ہے۔

یونیورسٹیوں میں امریکی سکیورٹی فورسز نے کارروائیاں کر کے مظاہرین پر ربڑ کی گولیاں تک چلائی ہیں اور طلبہ وطالبات کے علاوہ اساتذہ کو بھی گرفتار کر کے ہتھکڑیاں لگائی ہیں۔

وولکر ترک نے کہا 'میں امریکہ کے قانون نافذ کرنے والے بعض اداروں کی کارروائیوں پر سخت تشویش میں مبتلا ہوں۔ ان واقعات کے اثرات کافی زیادہ اور غیر متناسب ہیں۔' وولکر ترک نے اس سلسلے میں اپنا بیان اخبار نویسوں کو بھجوایا ہے۔‘

انہوں نے کہا 'یہ واضح ہونا چاہیے اظہار رائے کے قانونی وجائز حق کو کسی سے بھی چھینا نہیں جا سکتا ہے۔ نہ ہی اسے نفرت اور تشدد پر اکسانے سے جوڑا جا سکتا ہے۔‘

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں