سوڈان کی خود مختار کونسل کے سربراہ کے بیٹے کی ترکیہ میں ٹریفک حادثے میں موت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ترکیہ میں ’العربیہ‘ چینل کے نامہ نگار نے اطلاع دی ہے کہ ایک ماہ قبل انقرہ میں ٹریفک حادثے سوڈانی خود مختار کونسل کے سربراہ عبدالفتاح البرھان کا شدید زخمی ہونے والا بیٹا کل جمعہ کو ہسپتال میں دم توڑ گیا۔

نامہ نگار نے بتایا کہ محمد عبدالفتح البرھان آٹھ مارچ کو انقرہ میں ایک ٹریفک حادثے کے نتیجے میں شدید زخمی ہوگیا تھا جس کے بعد اسے ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ تقریبا ایک ماہ کے بعد زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسا۔

ڈوگان نیوز ایجنسی نے اطلاع دی ہے کہ محمد عبد الفتاح البرہان ترکیہ کے دارالحکومت انقرہ میں اپنی موٹرسائیکل چلا رہے تھے جب وہ ایک گاڑی سے ٹکرا گئے۔ ٹریفک حادثہ اتنا شدید تھا کہ محمد موٹرسائیکل سے اچھل کر دور جا گرے۔

انہوں نے مزید کہا کہ محمد البرھان کو زخمی حالت میں ہسپتال منتقل کردیا گیا تھا جہاں انہیں انتہائی نگہداشت وارڈ میں رکھا گیا۔

خیال رہے کہ سوڈان میں پندرہ اپریل 2023ء سے عبدالفتاح البرھان کی زیرکمان مسلح افواج اور محمد حمدان دقلو ’حمیدتی‘ کی قیادت میں ریپڈسپورٹ فورسز کے درمیان خونی لڑائی جاری ہے۔اس لڑائی میں دونوں طرف ہزاروں افراد جاں بحق اور لاکھوں بے گھر ہوچکے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں