ترکیہ میں برگرکا مقابلہ بچی کے لیے جان لیوا ثابت، مقابلے کی خوشی ماتم میں بدل گئی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ترکیہ کے شہر دوزجی کے ایک اسکول میں منعقدہ ہیمبرگر کھانے کے مقابلے کے شرکاء میں سے کسی نے یہ نہیں سوچا ہو گا کہ برگرکھانے کا ان کا شوق سانحے میں بدل سکتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ہیمبرگرکھانے کے مقابلے میں شامل 8 سالہ بچی گلے میں برگر پھنسنے کےباعث جان کی بازی ہار گئی۔

شہر کے ’چائی‘ جیسے پرسکون علاقے میں ایشک پرائمری اسکول میں تیز ہیمبرگر کھانے کا مقابلہ افسوسناک خبر کے ساتھ ختم ہوا۔

مقابلے کے ایک دلچسپ آغاز کے بعد 8 سالہ ایفتیلیا کایماک نے برگر کھانا شروع کیا مگر برگر کا کچھ حصہ اس کی سانس کی نالی میں چلا گیا۔اس پر اس کی حالت بگڑ گئی۔فوری طورپر طبی ٹیموں کو طلب کیا گیا مگر وہ تمام تر کوشش کے باوجود ننھی بچی کی جان بچانے میں ناکام رہے۔

واقعے کے بعد عدالتی اور انتظامی تحقیقات شروع کردی گئیں ہیں۔ متعلقہ حکام ان اقدامات کا جائزہ لے رہے ہیں جو ایسے واقعات کو روکنے کے لیے اٹھائے جا سکتے تھے۔

ماہرین نے زور دیا کہ جن سرگرمیوں میں بچے شرکت کرتے ہیں ان میں مزید اقدامات کیے جانے چاہئیں اور اسکولوں میں منعقد ہونے والی سرگرمیوں کی زیادہ احتیاط سے منصوبہ بندی کی جانی چاہیے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں