راہداریوں کی بندش سے غزہ میں خوراک فراہمی دو تہائی کمی واقع ہو گئی: اقوامِ متحدہ

امدادی کارروائیوں میں کمی کی وجہ اسرائیل کا رفح میں حالیہ فوجی آپریشن بتایا جاتا ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

اقوام متحدہ، جس نے اس سے پہلے بھی غزہ میں قحط کے خطرے سے خبردار کر رکھا ہے، بدھ کے روز اطلاع دی ہے کہ غزہ میں انسانی بنیادوں پر خوراک اور امداد کی ترسیل میں غیر معمولی کمی ہو گئی ہے۔

اس کمی کی وجہ رفح پر اسرائیلی حملہ اور رفح راہداری کی بندش بنی ہے۔ جس کے نتیجے میں امدادی سامان کی فراہمی اور خوراک کی ترسیل رواں ماہ کے دوران کم از کم دو تہائی تک کم ہو گئی ہے۔

اقوام متحدہ کا دفتر برائے تنسیق انسانی امور 'اوچھا' کے مطابق اس سے پہلے بھی غزہ کی پٹی میں انسانی بنیادوں پر فراہم کیا جانے والا سامان اور خوراک بے گھر فلسطینیوں کی ضروریات کے لیے انتہائی ناکافی تھا۔ تاہم اب اس میں مزید کمی ہو گئی ہے۔

سات مئی کے بعد سے امدادی سامان کی مقدار اور خوراک کی ترسیل سکڑ کر رہ گئی ہے۔ سات مئی سے اب اوسطاً 58 امدادی ٹرک غزہ کی طرف روانہ ہو پا رہے ہیں۔ جبکہ یکم اپریل سے چھ مئی تک یہ اوسط 176 امدادی ٹرک روزانہ کی تھی۔ 'اوچھا' کے مطابق یہ کمی 67 فیصد بنتی ہے۔

واضح رہے اقوام متحدہ ایک طویل عرصے سے مسلسل یہ کہتا رہا کہ غزہ میں 500 ٹرکوں پر آنے والا امدادی سامان یومیہ بنیادوں پر ضروری ہے ۔ جس سے 23 لاکھ سے زائد افراد کی ضروریات پوری ہو سکیں۔ لیکن اسرائیلی فوج کی موجودگی میں ایسا ایک دن بھی ممکن نہیں ہو سکا ہے۔

واحد راہداری جو سب سے زیادہ بروئے کار رہی ہے رفح پر حملے کے بعد سے وہ بھی بری طرح متاثر ہوئی ہے۔ اسرائیلی فوج نے رفح پر اپنا زمینی حملہ شروع کرنے کے بعد رفح راہداری کو بھی اپنے کنٹرول میں لے لیا تھا۔

کرم شالوم راہداری اسرائیل نے پہلے ہی بند کر رکھی تھی۔ یوں اب کوئی بھی راہداری اسرائیلی کنٹرول سے باہر نہیں رہی ہے اور اسرائیلی فوج ایک حکمت عملی کے تحت خوراک کی ترسیل کو روکنے کی کوشش میں رہتی ہے۔

اسرائیل کے اقوام متحدہ میں نائب سفیر جوناتھن ملر نے بدھ کے روز اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کو بتایا غزہ میں اسرائیل حماس کے خلاف جنگ کر رہا ہے، شہریوں کے خلاف نہیں۔ اس لیے اسرائیل غزہ میں امدادی سامان کی نقل وحرکت پر کوئی پابندی نہیں لگاتا۔

تاہم 'اوچھا' کا کہنا ہے کہ صورتحال مختلف ہے اور غزہ میں امدادی سامان کی فراہمی میں دو تہائی تک کمی ہو چکی ہے۔ حتیٰ کہ امریکہ کی بنائی گئی نئی غزہ بندرگاہ سے بھی پیر اور منگل کے روز کوئی امداد نہیں پہنچی ہے۔ اس سے پہلے اقوام متحدہ نے اس بندرگاہ کے راستے سے 137 ٹرکوں کے برابر خوراک غزہ منتقل کی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں