پیرا میڈکس کی ہلاکت کا جواب، حزب اللہ کی شمالی اسرائیل پر درجنوں میزائلوں سے بمباری

اسرائیلی ڈرون نے ناقورہ میں ایمبولینس کو نشانہ بنایا، ایک پیرامیڈیک ہلاک اور دوسرا زخمی ہو گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

حزب اللہ نے ایک اسرائیلی حملے میں پیرامیڈک کی ہلاکت کے جواب میں شمالی اسرائیل پر درجنوں میزائلوں سے بمباری کرنے کا اعلان کیا۔ اسرائیل نے جنوبی لبنان میں اسلامک ہیلتھ اتھارٹی کی ایمبولینس کو نشانہ بنایا۔ حزب اللہ نے ایک بیان میں کہا کہ ناقورہ قصبے میں سول ڈیفنس پر حملہ کیا گیا۔ جواب میں ہمارے جنگجوؤں نے شمالی اسرائیل پر کاتیوشا راکٹوں سے بمباری کی۔

غزہ میں 7 اکتوبر کو اسرائیل اور حماس کے درمیان جنگ شروع ہونے کے بعد سے حزب اللہ اور اسرائیل تقریباً روزانہ کی بنیاد پر سرحد پار سے بمباری کا تبادلہ ہوتا ہے۔ اسلامک ہیلتھ اتھارٹی کے ایک ذریعے نے نام ظاہر کرنے سے انکار کرتے ہوئے بتایا تھا کہ ایک اسرائیلی ڈرون نے ناقورہ میں ایک ایمبولینس کو نشانہ بنایا جس کی چھت پر بھی ایمبولینس کے الفاظ لکھے ہوئے تھے۔ حملے میں ایک پیرا میڈک اہلکار شہید اور دوسرا زخمی ہوگیا۔

چند روز قبل اسرائیل نے بنت جبیل قصبے میں حزب اللہ کی ہیلتھ اتھارٹی کے زیر انتظام ایک ہسپتال کو نشانہ بنایا تھا جس میں ہانتظامیہ کے مطابق دو شہری جاں بحق ہوگئے تھے۔ کشیدگی کے آغاز کے بعد سے اسرائیل نے متعدد بار لبنانی گروپوں سے وابستہ ایجنسیوں کے پیرامیڈیکس کو نشانہ بنایا ہے۔

28 مارچ کو ایک ہی دن میں 10 پیرا میڈکس کی ہلاکت کے بعد اقوام متحدہ نے صحت کی سہولیات اور پیرا مڈیکس پر بار بار کئے جانے والوں حملوں کی مذمت کی تھی اور ایسے حملوں کو ناقابل قبول قرار دیا تھا۔ جمعہ کو مرحوم عالم علی کورانی کی یادگار کے موقع پر ایک تقریر میں حزب اللہ کے سیکرٹری جنرل حسن نصر اللہ نے شمالی اسرائیل کے دورے کرنے والے سینئر اسرائیلی حکام کو خبردار کیا۔

حسن نصر اللہ نے جمعہ کو کہا ہے کہ اسرائیلی وزیر دفاع گیلنٹ شمالی اسرائیل آئے تاکہ آباد کاروں کو یہ باور کرایا جائے کہ انہوں نے کامیابیاں حاصل کی ہیں لیکن حزب اللہ نے کچھ دن قبل ہی سرحدی مقام کے قریب ایک آپریشن کرتے ہوئے جواب دیا۔ حسن نصراللہ نے کہا کہ پارٹی کے جنگجو اگر کسی مقام میں داخل ہونا چاہتے ہیں تو داخل ہوجاتے ہیں۔ یہ بات اسرائیلی خود تسلیم کرتے ہیں۔

اسرائیلی فوج اور حزب اللہ کے درمیان 120 کلومیٹر کی جنوبی لبنانی سرحد پر کشیدگی جاری ہے۔ حالیہ دنوں میں حزب اللہ نے سرحد پر راس الناقورہ سے الماری کے علاقے تک تین مقامات کو نشانہ بنایا ہے۔

کشیدگی کے آغاز کے بعد سے لبنان میں کم از کم 446 افراد جاں بحق ہو چکے ہیں جن میں سے کم از کم 87 شہری اور 289 حزب اللہ کے ارکان شامل ہیں۔ دوسری طرف اسرائیل کے مطابق اس کے 14 فوجی اور 11 شہری موت کے منہ میں جا چکے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں