.

شام کی قومی فٹبال ٹیم پر کویت میں ہم وطنوں کا حملہ

"فیفا شامی ٹیم کا خیر مقدم نہ کرے"

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
شام کی فٹبال ٹیم پر کویت میں میزبانوں کے خلاف دوستانہ میچ کے بعد اسٹڈیم میں موجود حکومت مخالف شامی تماشیوں نے حملہ کر دیا۔ کویت میں ہونے والے فٹبال مقابلے مغربی ایشیا اور خلیج فٹبال چیمپئین شپ کے کوالیفائنگ کے لئے ہیں۔

میچ کے دوران بھی بشار الاسد مخالف تماشائی مسلسل حکومت کے خلاف نعرہ بازی کرتے رہے۔ شام پر ہم دل و جان فدا کو تیار ۔۔۔۔ کے فلک شگاف نعرے بلند کرتے ہوئے شائقین شامی پرچم لہراتے رہے۔

العربیہ سے بات کرتے ہوئے ایک شامی تماشائی نے قومی ٹیم کی کویت آمد پر سخت ناراضی کا اظہار کیا۔ انہوں نے استفسار کیا کہ شامی فٹبال ٹیم کو کیا یہاں میچ کھیلنا زیب دیتا ہے کہ جب دوسری طرف بشار الاسد کی فوج کے ہاتھوں خواتین کی عصمتیں پامال ہو رہی ہیں۔

انہوں نے یہ بات انتہائی دکھ سے کہی کہ جس وقت کویت اور شام کی ٹیمیں میچ کے لئے میدان میں اتری، عین اس وقت حمص کی الخالدیہ کالونی پر سرکاری توپخانہ بمباری کر رہا تھا۔

ایک اور ناراض تماشائی غصے سے دمکتے ہوئے چہرے کے ساتھ بآواز بلند چلا رہا تھا کہ یہ ٹیم، شامی قوم نہیں بلکہ سرکار کی نمائندہ ہے۔ ہم سب ایک ہیں۔۔۔۔۔ ظالم سرکار جلد ختم ہو گی۔