.

20 ہزار افراد حج پرمٹ نہ ہونے کے باعث مکہ داخلے سے محروم

گیارہ حاجیوں کے لئے ایک خادم حج

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
سعودی عرب کی حج پاسپورٹ فورس کے کمانڈر بریگیڈئر عائض الحربی کا کہنا ہے کہ 20534 افراد کو مکہ مکرمہ کے متعدد داخلی راستوں پر قائم پوسٹوں سے حج پرمٹ نہ ہونے کی وجہ سے واپس کر دیا گیا۔

العربیہ ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق 1604 افراد کو احرام نہ ہونے کی وجہ سے واپس کیا گیا جبکہ دسیوں افراد جعلی پاسپورٹ اور ویزوں میں رد وبدل کی پاداش میں انٹری پوائنٹس سے واپس کئے گئے ہیں۔ جنرل ڈائریکٹیوریٹ آف پاسپورٹ کی خصوصی ٹاسک فورس نے خاتون کی عبایہ اوڑھے مرد 'حاجی' کو بھی گرفتار کیا ہے جو پاسپورٹ سیکیورٹی فورس کو جل دیتے ہوئے مکہ مکرمہ داخلے کی کوشش کر رہا تھا۔

اس سال حج کے لئے آنے والے فرزندان توحید کی خدمت کے لئے سعودی حکومت نے 245 ہزار مرد اور خواتین خدام الحجاج مقرر کئے ہیں۔ امسال 2.9 ملین افراد فریضہ حج ادا کر رہے ہیں۔ وزارت حج نے اللہ کے مہمانوں کی راہنمائی اور مدد کے لئے چار لاکھ پانچ ہزار خدام مقرر کئے

گزشتہ برس کے مقابلے میں امسال حج کرنے والوں کی تعداد میں پانچ فیصد اضافہ ہوا ہے۔

سعودی عرب کے باہر سے حج کے لئے آنے والوں کی تعداد 1.8 ملین ہو گئی ہے جبکہ ایک ملین سعودی شہری بھی اس سال یہ دینی فریضہ سرانجام دہے رہے ہیں۔ حج ڈائریکٹوریٹ کے مطابق پیر کے روز تک 1.6 ملین عازمین حج مملکت سعودی عرب پہنچ چکے تھے۔