.

جیش الحر کا دمشق کے نواح میں اہم فوجی ہوائی اڈے پر قبضہ

جہاد مقدسی بغاوت کے بعد واشنگٹن روانہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
شامی اپوزیشن پر مشتمل جیش الحر نے دارلحکومت دمشق کے مضافات میں 'عقربا' ہوائی اڈے کا کنٹرول سنبھال لیا ہے۔

العربیہ ٹی وی کے مطابق جیش الحر اور سرکاری فوجیوں کے درمیان 343 مقامات پر لڑائی کی اطلاعات ہیں۔ اپوزیشن کے جنگجوؤں نے داریا، زملکا اور دیگر کئی شہروں میں سرکاری فوج کے حملے کامیابی سے پسپا کئے ہیں۔

انقلابی کوارڈی نیشن کمیٹیوں کے مطابق دمشق کے مشرقی غوطہ ضلع میں جیش الحر نے ائر ڈیفنس کی ایک یونٹ پر بھی قبضہ کیا ہے۔ باغیوں نے الزبدانی کورنیش میں تین ٹینک اور اے پی سی تباہ کرنے کے ساتھ دعوی کیا ہے کہ چار روز تک جاری رہنے والی لڑائی میں انہوں نے عقربا فوجی ہوائی اڈے پر بھی اپنا کنڑول قائم کر لیا ہے۔

بشارالاسد کی وفادار فوج سے دارلحکومت کے نواح میں ہونے والی شدید لڑائی میں انقلابیوں نے چار ٹینک تباہ کر دیئے۔ دمشق کے جنوبی حصے میں شاہراہ فلسطین پر واقع الطربوش اسکوائر کے پاس بھی سرکاری فوج اور جیش الحر کے جنگجوؤں کے درمیان شدید لڑائی کی اطلاعات ہیں۔

ادھر برطانوی اخبار 'گارڈین' نے اپنی حالیہ رپورٹ میں بتایا کہ شامی وزارت خارجہ کے باغی ترجمان جہاد مقدسی بیروت کے راستے امریکا روانہ ہو گئے ہیں۔ سفارتی ذرائع کے حوالے سے برطانوی روزنامے نے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ آخری اطلاعات تک مقدسی امریکا نہیں پہنچے ہیں۔