.

مصری فوج کے ٹینک صدارتی محل کے گرد تعنیات

صدر مرسی قوم سے خطاب کرنے والے ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
صدر ڈاکٹر محمد مرسی کے اقتدار سبنھالنے کے پانچ ماہ بعد پہلی مرتبہ فوج سڑکوں پر ایک مرتبہ پھر دکھائی دینے لگی ہے۔ برطانوی خبر رساں ادارے 'رائیٹرز' نے اپنی رپورٹ میں بتایا ہے کہ تین ٹینک اور دو اے پی سی قاہرہ کے صدارتی محل کے باہر دیکھی گئیں۔



بدھ کی شب قصر الاتحادیہ [صدارتی محل] کے اردگرد صدر مرسی کے حامیوں اور مخالفین کے درمیان شدید جھڑپیں جاری رہیں۔ یہ جھڑپیں گزشتہ روز بعد دوپہر شروع ہوئیں اور جمعرات علی الصباح تک جاری رہیں۔ ان میں پانچ افراد ہلاک جبکہ سیکڑوں کے زخمی ہونے کی بھی اطلاع ہے۔

ادھر عینی شاہدین نے بھی صدارتی محل کے باہر تین ٹینکوں کی موجودگی کی تصدیق کی ہے۔ ٹینکوں کے جلو میں دو آرمڈ پرسنل کیریئرز بھی دیکھی گئی۔ اپوزیشن نے جمعرات کے روز صدارتی محل کی جانب مزید احتجاجی مارچ کرنے کا اعلان کر رکھا ہے۔

سرکاری ذرائع نے العربیہ سے بات کرتے ہوئے تصدیق کی ہے کہ صدر مرسی جمعرات کے روز کسی وقت قوم سے خطاب کرنے والے ہیں جس میں اہم اعلان متوقع ہے۔