.

دمشق میں جیش الحر اور شامی فوجیوں کے درمیان جھڑپیں

جیش الحر نے یرموک کیمپ کا کنڑول سنبھال لیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
شامی میڈیا سینٹر نے دمشق کے علاقے القزاز میں سرکاری فوج اور باغی جنگجوؤں کے درمیان شدید جھڑپوں کی تصدیق کی ہے۔ سینٹر کے مطابق جھڑپوں میں فریقین ک بڑے پیمانے پر جانی نقصان کی اطلاعات ہیں۔ العربیہ نیوز چینل کی رپورٹ کے مطابق دارلحکومت کی ایک جیل میں قیدیوں کی بغاوت کی اطلاعات موصول ہو رہی ہیں جس میں جانی نقصان کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے۔

جیش الحر کی جنوبی کمان نے دعوی کیا ہے کہ ان جنجگوؤں نے علاقے میں فلسطینی مہاجر کیمپ کو سرکاری فوج کے کنڑول سے آزا کرا کے اس کی کمان سنبھال لی ہے۔ جیش الحر نے لڑائی کے باعث کیمپ چھوڑ کر لبنان یا اردن منتقل ہونے والے فلسطینی اور شامی شہریوں سے کہا ہے کہ وہ اپنے علاقے میں واپس آ جائیں۔

ادھر ڈیموکریٹک فرنٹ برائے آزادی فلسطین کے جنرل سیکرٹری نایف حواتمہ نے کہا ہے کہ فلسطینی قیادت نے شامی فوج اور جیش الحر کو یرموک کیمپ کی صورتحال پر تبادلہ خیال کے لئے تجاویز پیش کی ہیں۔ یرموک کیمپ کے نمائندوں، شامی فوج اور جیش الحر نے غیر جانبدار ہو کر مذاکرات کئے ہیں تاکہ علاقے سے نقل مکانی اور متوقع انسانی بحران کو روکا جا سکے۔