.

جیش الحر نے ادلب میں کھلی جنگ کا اعلان کر دیا

الوطن اخبار نے بالواسطہ حلب پر اپوزیشن کنڑول تسلیم کر لیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
شامی اپوزیشن کے جگجوؤں پر مشتمل جیش الحر نے بدھ کے روز بھی حلب سمیت مختلف علاقوں میں فوجی اور اسٹرٹیجک اہمیت کے اہداف کو سرکاری فوج کے کنڑول سے آزاد کرانے کا دعوی جاری رہا۔ جیش الحر نے ادلب میں معمرہ شہر کا کنڑول حاصل کرنے کے لئے شامی فوج کے خلاف لڑائی کا آغاز کر دیا ہے۔

ادھر شامی اخبار 'الوطن' نے انکشاف کیا ہے سرکاری فوجی حلب شہر کا کںڑول کھو چکے ہیں۔ اپنے اداریئے میں اخبار نے کہا کہ اپوزیشن کے جنگجو حلب میں اپنی حکومت قائم کرنے کی خاطر گلیوں کا صفایا کر رہی ہے۔ الزبدانی میں شہر پر سرکاری فوج کے حملے کی کوشش میں پرتشدد جھڑپیں جاری ہیں

ادھر انقلاب جنرل کونسل کا کہنا ہے کہ سرکاری فوج نے شام کے طول و عرض میں 270 اہداف کو نشانہ بنایا۔ دمشق میں سرکاری فوج نے یرموک کیمپ سیمت جنوبی دمشق کی متعدد کالونیوں پر گولا باری کی۔ حمص میں سرکاری فوج نے جورہ الشیاح کالونی جبکہ الرقہ میں السباھیہ اور حزیمہ کے علاقے پر بمباری کی جس کے باعث اہل علاقہ نے بڑے پیمانے پر نقل مکانی شروع کر دی ہے۔ حماہ میں سرکاری فوج نے کفربنودہ شہر پر بمباری کی ۔

ادلب کے وادی الضیف کیمپ میں سرکاری فوج اور جیش الحر کے درمیان شدید لڑائی کی اطلاعات موصول ہو رہی ہیں۔ ادھر حلب کے الغندول راؤنڈ اباؤٹ اور کینیڈین ہسپتال کے قریب جیش الحر نے تین ہیلی کاپٹروں پر فائرنگ کا دعوی کیا ہے۔ جیش الحر نے منغ فوجی ہوائی اڈے کے قریب شامی فوج کا ایک ٹینک بھی نذر آتش کیا ہے۔