اسرائیل کا شام پر فضائی حملہ، امریکی حکام کا دعوی

شامی اپوزیشن کے ٹھکانوں پر اسدی فوج کا میزائل لانچر سے حملہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

امریکی سیٹلائٹ ٹی وی چینل 'سی این این' نے نامعلوم حکام کے حوالے سے بتایا ہے واشنگٹن سمجھتا ہے کہ اسرائیل نے شام پر فضائی حملہ کیا ہے۔ یو این میں شامی سفیر نے اس دعوی پر فوری ردعمل میں کہا ہے کہ انہیں شام پر اسرائیلی حملے کے بارے میں علم نہیں ہے۔

سی این این نے امریکی حکام کے حوالے سے دو بیان نقل کئے ہیں۔ ایک بیان کے مطابق اغلب امکان ہے کہ اسرائیل نے یہ حملہ جمعرات اور جمعہ کی شب کیا ہو، جس میں اسرائیلی لڑاکا طیارے شامی فضائی حدود میں داخل نہیں ہوئے۔ امریکی حکام کا مزید کہنا تھا کہ وہ نہیں سمجھتے کہ اسرائیلی لڑاکا جہازوں نے شام میں کیمیائی اسلحہ تیاری کے کسی ادارے کو نشانہ بنایا ہے۔

اس ساری پیش رفت کی فوری طور پر تصدیق نہیں ہو سکی۔ امریکی وائٹ ہاوس کے ترجمان نے سی این این رپورٹ سے متعلق تمام سوالوں کا رخ اسرائیل کی جانب موڑ دیا، تاہم ادھر مقبوضہ بیت المقدس میں اسرائیلی فوج کے عہدیدار نے امریکی نشریاتی ادارے کی رپورٹ پر تبصرہ کرنے سے انکار کر دیا۔ اسرائیلی فوج کی خاتون ترجمان نے یہ کہتے ہوئے تبصرے سے انکار کیا کہ "ہم اس قسم کی رپورٹس پر تبصرہ نہیں کیا کرتے۔"

واشنگٹن میں اسرائیلی سفارتخانے کے ترجمان کا بھی کہنا تھا کہ وہ ایسی رپورٹ پر رائے دینے کے مجاز نہیں، تاہم میں صرف اتنا کہوں گا کہ اسرائیل، کیمیائی یا دوسرے اسلحے کی نقل و حمل کی اجازت دے کر جنگ کا پانسہ شامی حکومت کے حق میں تبدیل نہیں کرانا چاہتا۔

انہوں نے کہا کہ سی این این کی رپورٹ کی روشنی میں امریکا نے مبینہ حملے کے وقت جو معلومات جمع کی ہیں ان سے پتا چلتا ہے کہ اس وقت اسرائیلی لڑاکا طیارے لبنان پر پرواز کرتے رہے۔
یاد رہے کہ ماضی میں اسرائیل اس امر کا اعلان کر چکا ہے کہ تل ابیب جدید اسلحہ لبنانی حزب اللہ سمیت

دوسری مشتدد جماعتوں کے ہاتھ جانے سے روکنے کی ہر ممکن کوشش کرے گا۔ حزب اللہ نے سن 2006ء میں ایسے ہی جدید اسلحے کی مدد سے اسرائیل کو چونتیس دن ناکوں چنے چبوائے تھے۔

امسال جنوری میں اسرائیل نے شام کے اندر ایک قافلے کو نشانہ بنایا جس میں سفارتکاروں کے مطابق حزب اللہ کو بھیجے جانے والے گارکو کو ہدف بنایا گیا تھا۔ اس حملے کی تصدیق سفارتکاروں کے علاوہ حکومت مخالف شامیوں اور علاقے میں سیکیورٹی اہلکاروں نے بھی کی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں