.

گولان کی پہاڑیوں پر شامی علاقے سے راکٹ باری

ہاون راکٹ یہودی بستی میں فوج کی کشتی پارٹی کے قریب گرے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مقبوضہ بیت المقدس سے 'العربیہ' کے نامہ نگار نے اپنے مراسلے میں بتایا ہے کہ پیر کے روز شام سے داغے جانے والے ھاون راکٹ اسرائیل کے زیر قبضہ گولان کی الونی ھبشان یہودی بستی میں گرے ہیں۔ یہ راکٹ اسرائیلی فوج کی ایک گشتی پارٹی کے قریب گرے تاہم اس سے کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔

گزشتہ چند ہفتوں کے دوران گولان کی پہاڑیوں پر شام کی جانب چار مرتبہ راکٹ باری کی جا چکی ہے۔

گزشتہ ہفتے شامی علاقے سے داغے جانے والے راکٹ مقبوضہ جبل حرمون پر گرے جس کے بعد یہ سیاحتی علاقہ عام لوگوں کی آمد و رفت کے لئے بند کر دیا گیا۔ اسرائیلی وزیر دفاع موشیہ یعالون نے مقبوضہ گولان میں شامی علاقے سے کی جانے والی راکٹ باری کا فوری جواب دینے کی دھمکی دی تھی اور خبردار کیا تھا کہ نتائج کی تمام تر ذمہ داری شام پر ہو گی۔