.

مصر کے سابق وزیر خزانہ حازم الببلاوی عبوری وزیر اعظم نامزد

آئی اے ای اے کے سابق سربراہ محمد البرادعی کو عبوری نائب صدر بنا دیا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کے عبوری صدرعدلی منصور نے سابق وزیرخزانہ اور ماہر معیشت حازم الببلاوی کو ملک کا نیا عبوری وزیراعظم اور جوہری توانائی کے عالمی ادارے (آئی اے ای اے) کے سابق سربراہ محمد البرادعی کو نائب صدر نامزد کیا ہے۔

عبوری صدر کے میڈیا مشیر احمد المسلمانی نے منگل کو ان دونوں اہم عہدوں پر نامزدگیوں کا اعلان کیا ہے۔منتخب صدر محمد مرسی کی حکومت کی مسلح افواج کے ''انقلاب'' کے نتیجے میں برطرفی کے بعد سے عبوری وزیراعظم کے لیے مختلف ناموں پر غور کیا جارہا تھا اور اس سے پہلے محمد البرادعی کا عبوری وزیر اعظم کے عہدے کے لیے نام سامنے آیا تھا لیکن نئی کابینہ کی تشکیل کے لیے مذاکراتی عمل میں شریک ایک اسلامی جماعت نے ان پر اعتراض کیا تھا جس پر ان کا نام واپس لے لیا گیا تھا۔

حازم الببلاوی سابق مطلق العنان صدر حسنی مبارک کی فروری 2011ء میں سبکدوشی کے بعد تشکیل پانے والی کابینہ میں وزیرخزانہ رہے تھے لیکن انھوں نے اسی سال اکتوبر میں سکیورٹی فورسز کے مظاہرین کے خلاف کریک ڈاؤن کے بعد استعفیٰ دے دیا تھا۔اس کریک ڈاؤن میں چھبیس مظاہرین مارے گئے تھے اور ان میں زیادہ تر عیسائی اقلیت سے تعلق رکھتے تھے۔

ڈاکٹر محمد مرسی کی حکومت کے خاتمے کے بعد نئی عبوری کابینہ کی تشکیل کے لیے مذاکرات کے عمل میں سلفی تحریک کی جماعت حزب النور بھی شریک رہی ہے۔اس نے مسلح افواج کے نامزد عبوری صدر عدلی منصور کی جانب سے وزارت عظمیٰ کے لیے پیش کیے گئے مختلف ناموں پر اعتراض کیے تھے اور صرف حازم الببلاوی کے نام پر رضامندی ظاہر کی ہے۔حزب النور کے سربراہ کا کہنا ہے کہ وہ محمد البرادعی کی نائب صدر کے عہدے پر نامزدگی پر ابھی غور کر رہے ہیں۔