مصر: صحرائے سینا میں فوجی کمانڈر کی گاڑی پر مسلح افراد کا حملہ

علاقے میں انتہا پسند عناصر کی سرگرمیاں بڑھ گئیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ان دنوں مصر میں جزیرہ نما صحرائے سینا میں عسکریت پسندوں کے حملوں میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔ سیکیورٹی چیک پوسٹ پر فوجی کمانڈر کی گاڑی کو نشانہ بنایا گیا تاہم اسے پہلے چیک پوسٹ پر حملے میں انتہا پسند عناصر اور سیکیورٹی فوسرز کے درمیان فائرنگ کے نتیجے میں دو افراد جاں بحق ہو گئے تھے۔

سیکیورٹی عہدیداروں کے مطابق فوجی کمانڈر پر حملہ غزہ بارڈر کے قریبی علاقے شیخ زوید میں کیا گیا۔ فوجی ترجمان نے کہا کہ حملے میں سیکیورٹی فورسز اور انتہا پسندوں میں فائرنگ کا تبادلہ ہوا اور نتیجے میں فوجی کمانڈر کی گاڑی نے آگ پکڑ لی۔ لیکن کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔

فوجی ذرائع نے مزید کہا کہ فائرنگ کے نتیجے میں ایک لڑکی زخمی ہوئی اور بعد میں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسی۔ فوجی ذرائع نے حالیہ حملوں کو مصری قومی سلامتی کے لیے خطرہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ انتہاپسند مصر میں انتشار کو بڑھانا چاہتے ہیں اور یہ تاثر دینا چاہتے ہیں کہ حالات قابو سے باہر ہیں ۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں