.

محفوظ حج انتظامات پر پاکستانی وزیر کی سعودی حکومت کو مبارکباد

سعودی وزیر حج سیزن کے بعد پاکستان کا دورہ کریں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان کے وزیر مذہبی امور سردار محمد یوسف نے سعودی عرب کے وزیر حج بندر الحجار سے جدہ میں ملاقات کی۔ سعودی عرب کا دورہ کرنے والے پاکستانی وزیر مذہبی امور نے سعودی حکام سے اس سال حج کے بارے میں تبادلہ خیال کیا۔ اس موقع پر سعودی عرب میں پاکستان کے سفیر محمد نعیم خان بھی موجود تھے۔

سردار محمد یوسف نے سعودی وزیر حج کو اپنے ملک کی جانب اس سال حاجیوں کے لئے کئے جانے والے اقدامات کے بارے میں بریفنگ دی۔ انہوں نے سعودی وزیر کو بتایا کہ اس سال پاکستانی حاجیوں کی رہائش گاہوں، مواصلات اور دیگر خدمات کی فراہمی پر حکومت کو بہت زیادہ رقم خرچ کرنا پڑی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ حاجیوں کی بہتری کی خاطر خادم الحرمین الشریفین نے اس سال جو اقدامات کئے ہیں، پاکستان انہیں عقیدت کی نظر سے دیکھتا ہے۔ اس موقع پر سعودی وزیر حج نے کہا کہ ہمارے فیصلے دنیا بھر سے آنے والے حاجیوں کی بہتری کے لئے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ مسجد حرم میں مطاف کے علاقے میں کی جانے والی توسیع کے بعد اس سال وہاں 48000 حاجیوں کے بجائے 150000 حجاج ایک گھنٹے میں طواف مکمل کر سکیں گے۔

بندر الحجار نے بتایا کہ ان کی وزارت مسجد حرام کے توسیع منصوبے کے بارے میں ایک ویڈیو مہمان وزیر کو پیش کرے گی تاکہ وہ اسے اپنے ملک سے آنے والے عازمین حجاج کو دکھائیں جس سے انہیں منصوبے کے حجم اور اس سے حاجیوں کو ملنے والی سہولیات کا اندازہ ہو گا۔

سردار محمد یوسف نے سعودی وزیر حج کو دورہ پاکستان کی دعوت دی جو انہوں قبول کر لی۔ بندر الحجار کے دورہ پاکستان کے انتظامات اس سال حج کے بعد کئے جائیں گے۔