بشارالاسد: ساکھ بہتر کرنے کی کوششیں، انسٹاگرام پر اکاونٹ کھول لیا

صارفین صرف شامی صدر کے حق میں کیے گئے تبصرے دیکھ سکیں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

شامی صدر بشار الاسد کے دفتر نے ان کا عالمی رائےعامہ کے سامنے تاثر بہتر کرنے اور ان کی شخصیت کا نرم پہلو سامنے لانے کی کوشش کے طور پر تصاویر شئیر کرنے کی سماجی ویب سائٹ'' انسٹاگرام'' کا استعمال شروع کر دیا ہے۔ اس اکائونٹ میں شئیر کی جانیوالی تصاویر میں دکھایا جا رہا ہے کہ شامی صدر ہسپتالوں میں مریضوں کی عیادت کر رہے ہیں اور سرکاری عہدیداران سے ملاقات کررہے ہیں۔ گویا شامی صدر بھی عام لوگوں کی طرح ہمدردی اور محبت کے جذبات رکھتے ہیں۔

شامی صدر کا عملہ سماجی رابطے کی دیگر ویب سائتس یوٹیوب، فیس بک اور ٹویٹر کو بشارالاسد کی ساکھ بہتر بنانے کے لیے پہلے ہی استعمال کر رہا ہے۔ اب انسٹاگرام کے ذریعے بھی بشارالاسد کی گرتی ہوئی ساکھ بہتر بنانے اور اس کے باقی رہ گئے حامیوں کے حوصلے بڑھانے کی ایک کوشش شروع کی گئی ہے۔

خبر رساں اداروں کے مطابق بشارالاسد کی تصاویر پر ان کے حامیوں نے تبصرے کئے جن میں سے ایک تصویر کے ساتھ لکھا ہے "ہم تم سے پیار کرتے ہیں۔" مگر انسٹاگرام کے اس تصویری اکائونٹ پر بشار الاسد اور ان کی حکومت کے بارے میں کیے جانے والے منفی تبصرے اکائونٹ انتظامیہ کی جانب سے نکال دئیے جاتے ہیں۔ بشار حکومت کے مخالف بلاگرز نے ٹویٹر پر بتایا کہ ان کو بشار الاسد کے انسٹاگرام اکائونٹ سے بلاک کر دیا گیا ہے۔

ایمنسٹی انٹرنیشنل کی طرف سے شام میں انسانی حقوق کے معاملات پر نظر رکھنے کے لئے برطانیہ میں موجود شعبے کی سربراہ کرسٹیان بینیڈکٹ کا کہنا ہے کہ شامی صدر کے لئے ان کی تصویر انتہائی اہمیت کی حامل ہو سکتی ہے مگر ایسی بے شمار تصاویر ، ٹویٹس اور فیس بک پوسٹس بھی شامی صدر کے دامن پر لگے داغ نہیں مٹا سکتی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں