راس الخیمہ ائیر ویز کی اسلام آباد کے لئے کامیاب افتتاحی پرواز

آر اے کے کے چیئرمین نے کیک کاٹ کر پرواز کا افتتاح کیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

متحدہ عرب امارات کی راس الخیمہ ائیر ویز [آر اے کے] کی اسلام آباد کے لئے پہلی پرواز مقررہ وقت پر روانہ ہوئی۔ فلائیٹ RT567 ایئر لائن کی پاکستان کے لئے پروازوں میں تیسرا اضافہ ہے جبکہ تیزی سے ترقی کرتی ہوئی آر اے کے ائیر ویز کی اسلام آباد روٹ پر یہ پہلی پرواز ہے۔

راس الخیمہ ائیر ویز کے چیئرمین عمر بن صقر القاسمی، آر اے کے ائیر ویز کے صدر اور چیف ایگزیکٹیو آفیسر المرابط الصواف نے افتتاحی پرواز کے موقع پر راس الخیمہ بین الاقوامی ہوائی اڈے کے پرل بزنس لاؤنج میں پہلی پرواز کے عملے اور متعدد خیر خواہوں کی موجودگی میں کیک کاٹا۔

مسٹر الصواف نے اس موقع پر اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ "پاکستان کے دارلحکومت کے لئے ہماری پہلی پرواز پر مسافروں کی بکنگ کی رفتار حوصلہ افزا ہے۔ راس الخیمہ ائیر ویز کی ہفتے میں دو پروازیں اسلام آباد کے لئے ہوں گی۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ اسلام آباد روٹ کے افتتاح سے یو اے ای کی منفرد فضائی سروس کے مسافروں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہو گا۔

سن دو ہزار تیرہ کے پہلے چھ مہینوں کے دوران راس الخیمہ ائیر ویز نے پاکستان کے دو شہروں لاہور اور پشاور کے لئے اپنی پروازیں ہفتے میں تین کر دیں تاکہ راس الخیمہ سے ان شہروں کو سفر کرنے والے تارکین وطن کی بڑھتی ہوئی سفری ضروریات کو پورا کیا جا سکے۔

یاد رہے کہ راس الخیمہ سے اسلام آباد کے لیے ہفتے میں دو پروازوں کے بعد سے ایئر لائن کے آپریشنل روٹس کی تعداد گیارہ ہوجائے گی جبکہ فضائی کمپنی 2015ء تک اپنے روٹس کی تعداد 40 تک بڑھانے کا ارادہ رکھتی ہے۔

راس الخیمہ ایئر لائن نے اپنے اہداف کامیابی کے ساتھ بروقت مکمل کرنے پر خوب نیک نامی کمائی ہے۔ جولائی کے آغاز میں مسٹر الصواف نے راس الخیمہ سے اسلام آباد کے لیے پانچ اگست اور راس الخیمہ سے عمان (اردن) کے لیے سات اگست سے پروازیں شروع کرنے کا وعدہ کیا تھا، جن میں اسلام آباد روٹ کی پرواز کا کامیابی سے آغاز ہو چکا ہے۔ ان نئے روٹس پر پروازوں کےآر اے کے کے آپریشنل روٹس کی تعداد گیارہ ہوجائے گی جبکہ فضائی کمپنی 2015ء تک اپنے روٹس کی تعداد چالیس تک بڑھانے کا ارادہ رکھتی ہے۔

رواں سال کی پہلی ششماہی میں ایئر لائن کے ذریعے سفر کرنے والوں کی تعداد میں چالیس فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں