.

یو اے ای: ماں کا 20 کلوگرام سونا چُرانے کے الزام میں بیٹی گرفتار

بھارتی دوشیزہ پاکستانی عاشق کے ساتھ فرار کی کوشش میں دھر لی گئی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

متحدہ عرب امارات میں ایک بیس سالہ دوشیزہ کو اپنی والدہ کے تیس لاکھ درہم (816771 ڈالرز) مالیت کے طلائی زیورات چُرا کر بھاگنے کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔

یو اے ای پولیس نے اس بھارتی دوشیزہ کی شناخت صرف این کے ڈی کے نام سے کی ہے اور اسے شارجہ کے ہوائی اڈے پر گرفتار کیا گیا ہے۔ وہ مبینہ طور پر طلائی زیورات چُرا کر بیرون ملک جارہی تھی۔

یو اے ای سے شائع ہونے والے روزنامے گلف نیوز کی رپورٹ کے مطابق اس لڑکی کی والدہ نے اس کو بیس کلوگرام وزنی طلائی زیورات کے ساتھ ہوائی اڈے پر محکمہ کسٹمز کے باہر ایک ٹیکسی میں چھوڑا تھا تاکہ وہ اس سونے کو واپس بھارت لے جانے کے لیے اپنے کاغذات کو مکمل کرا سکے۔

لیکن اس لڑکی نے ہوشیاری دکھائی اور وہاں سے زیورات سمیت غائب ہو گئی۔ اس کے بعد اس کی والدہ نے خیال کیا کہ اس کو اغوا کر لیا گیا ہے اور اس نے شارجہ پولیس کو اس کے لاپتا ہونے کی اطلاع دینے کے لیے بلا لیا مگراس لڑکی کو چند گھنٹے کے بعد ہوائی اڈے سے گرفتار کر لیا گیا۔

شارجہ پولیس کا کہنا ہے کہ اس لڑکی نے اپنا فون بند کردیا تھا اور اپنی ماں کا سونا لے کر اپنے بوائے فرینڈ کے پاس چلی گئی تھی اور اس کے ساتھ وہ شارجہ سے بھاگنے کی تیاری کررہی تھی۔

پولیس نے اس لڑکی کے مبینہ عاشق کے بارے میں بتایا ہے کہ وہ پاکستانی ہے۔ وہ بھی لڑکی کے ساتھ مل کر زیورات کو محفوظ طریقے سے یو اے ای سے باہر منتقل کرنے کی منصوبہ بندی کر رہا تھا لیکن وہ دونوں راتوں رات امیر بننے کے چکر میں اپنے منصوبے پر عمل درآمد سے قبل ہی پکڑے گئے ہیں۔