سعودی عرب میں گاڑیوں کے استعمال میں 33 فیصد اضافہ

سعودیہ کو گاڑیاں بیچنے والے ملکوں میں امریکا سب سے آگے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی شہریوں میں دولت کی ریل پیل اور خوشحالی ملک میں کاروں کی درآمد میں غیر معمولی اضافے کا ذریعہ ہے۔ صرف2012 ء کے دوران کاروں کی 33 فیصد زیادہ درآمد ہوئی ہے۔

محکمہ شماریات کے مطابق 2012 ء میں سعودی شہریوں نے امریکا، جنوبی کوریا اور جاپان سے مختلف برانڈ کی تقریبا دس لاکھ گاڑیاں بیرون ملک سے منگوائیں، جو کہ سال 2011ء میں درآمد شدہ گاڑیوں کے مقابلے میں 33 فیصد نمایاں اضافہ ہے۔ اس امر کا انکشاف مرکزی شماریات ڈیپارٹمنٹ کی شائع رپورٹ میں کیا گیا ہے۔

مرکزی شماریات ڈیپارٹمنٹ کےجاری کردہ اعدادوشمار کے مطابق 2011ء میں 42 فی صد اضافے کے ساتھ سال 2012ء میں درآمد کی گئی گاڑیوں کی کل مالیت 76.6 ارب سعودی ریال ہے۔

رپورٹ کے مطابق 2011ء تک امریکا گاڑیوں کے حوالے سے واحد برآمد کنندہ کے طور پر جانا جاتا ہے جبکہ اس سے پہلے یہ پوزیشن جاپان کے پاس تھی۔

رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ سعودی عرب کو گاڑیوں کی برآمدات کے حوالے سے امریکا کے بعد اب جنوبی کوریا دوسرے اور جاپان تیسرے درجے پر فائز ہے۔

مرکزی شماریات ڈیپارٹمنٹ نے واضح کیا کہ سعودی عرب نے گزشتہ سال20.59 ارب سعودی ریال کی 215000 گاڑیاں امریکہ سے اور 207000 گاڑیاں جنوبی کوریا سے درآمد کیں۔

واضح رہے حالیہ برسوں کے دوران سعودی عرب میں اقتصادی ترقی کی دیگر علامات کے طور پر سڑکوں کا وسیع جال، صنعتوں کا فروغ اور تعلیمی دنیا میں جدید سہولیات سے مزین جامعات کا قیام اہم ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں